بس میں لوٹ مار، ڈاکوں کی فائرنگ سے مسافر جاں بحق

  بس میں لوٹ مار، ڈاکوں کی فائرنگ سے مسافر جاں بحق

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر) سپرہائی وے پر بس میں لوٹ مار کے دوران مزحمت پر زخمی ہونے والا مسافر دوران علاج دم توڑ گیا، کورنگی پولیس نے خاتون سمیت دو ڈاکوؤں کو گرفتار کرلیا، گلشن اقبال میں چور ایک اور موٹرسائیکل لے کر فرار ہوگئے۔تفصیلات کے مطابق کراچی کی معروف شاہراہ سپرہائی وے پر بس میں لوٹ مار کے دوران قتل کا واقعہ پیش آیا ہے، محنت کش کے قتل کا مقدمہ گڈاپ تھانے میں درج کرلیا گیا۔پولیس کے مطابق مذکورہ مقدمہ مقتول امتیاز کے بھائی کی مدعیت میں درج کیا گیا، کراچی سے حیدرآباد جانے والی بس میں لوٹ مار کے دوران فائرنگ کی گئی، جس کے بعد امتیاز نامی شہری صبح اسپتال میں دوران علاج دم توڑ گیا تھا۔پولیس کا کہنا ہے کہ کراچی سے حیدرآباد جانے والی بس میں 4ملزمان بھی سوار تھے، ملزمان نے ٹول پلازہ سے آگے جاکر بس روک کر مسافروں سے لوٹ مار کی، اس دوران امتیاز نے مزاحمت کی جس پر ملزمان نے فائرنگ کرکے اسے زخمی کردیا۔مقتول امیتاز اپنی اہلیہ کے ساتھ کراچی سے حیدرآباد جارہا تھا، دوسری جانب کراچی کے علاقے گلشن اقبال میں موٹر سائیکل چوری کی ایک اور واردات ہوئی ہے۔جس کی سی سی ٹی وی فوٹیج میں دیکھا جاسکتا ہے کہ گھر کے باہر کھڑی موٹرسائیکل کو اسٹریٹ کرمنل لے کر چلتا بنا، متاثرہ شہری نے گلشن تھانے میں مقدمہ درج کرا دیا۔علاوہ ازیں کورنگی پولیس نے کارروائی کرکے اسٹریٹ کرائم میں ملوث ملزم اور اس کی خاتون ساتھی کو گرفتار کرلیا، پولیس کا کہنا ہے کہ ملزمان کے قبضے سے اسلحہ برآمد کرلیا گیا ہے۔ملزمان ڈکیتی، اقدام قتل جیسے سنگین جرائم میں ملوث ہیں، گرفتار ملزم اور ملزمہ نے دوران تفتیش مختلف علاقوں میں اسٹریٹ کرائم کی وارداتوں کااعتراف بھی کرلیا ہے

مزید :

صفحہ آخر -