فپواسا کا چیئرمین ہائیرایجوکیشن کمیشن کی برطرفی کا مطالبہ: 24اگست کو احتجاج کا اعلان

فپواسا کا چیئرمین ہائیرایجوکیشن کمیشن کی برطرفی کا مطالبہ: 24اگست کو احتجاج ...

  

پشاور(سٹی رپورٹر) فیڈریشن آف آل پاکستان یونیورسٹیز اکیڈمک اسٹاف ایسوسی ایشن (فپواسا) نے چیئرمین ہائیر ایجوکیشن کمیشن کی برطرفی کا مطالبہ کرتے ہوئے، 24 اگست کو ایچ ای سی کے سامنے احتجاج کا اعلان کیا ہے اس بات کا فیصلہ ایسو سی ایشن کے ان لائن ایگزیکٹو کونسل اجلاس میں کیا گیا جسمیں پاکستان کی مختلف یونیورسٹیوں کے صوبائی چیپٹرز اور اکیڈمک۱ اسٹاف ایسوسی ایشن (اے ایس اے) کے نمائندوں نے شرکت کیااجلاس سے شرکاء کا کہنا تھا کہ ایچ ای سی کے نا اہل ٹیم کی وجہ سے اعلیٰ تعلیم کو تباہی کا سامنا ہے انہوں نے کہا کہ نے اکیڈمیا کے بارے میں چیئرمین ایچ ای سی کے رویے پرشدید مایوسی کا اظہار کیا، جو پچھلے دو سالوں میں متعدد بار اکیڈیمیا کے مسائل کو حل کرنے اور اپنے وعدوں کو برقرار رکھنے میں بری طرح ناکام رہے ہیں، چیئرمین اور ان کی ٹیم، اعلی تعلیم کے شعبے کے جن مسائل کو حل کرنے میں ناکام رہی ہے ان میں ہائر ایجوکیشن کا بجٹ، بی پی ایس فیکلٹی کے لئے پوسٹ پی ایچ ڈی تجربہ کی شرط، ٹی ٹی ایس فیکلٹی کے لئے ملازمت کا تحفظ، انتظامی پوزیشن پر کام کی اجازت،اپوائنٹمنٹ اور ترقی کی توثیق اور تنخواہ میں اضافہ شامل ہیں - فپواسا نے مطالبہ کیا ٹی ٹی ایس فیکلٹی کی اپوائنٹمنٹ / تقرری کی توثیق ایچ ای سی سے کروانا، یونیورسٹیوں کی خودمختاری کے خلاف ہے اور اسے فوری طور پر ختم کیا جانا چاہئے جسکو ایچ ای سی اساتذہ کو نشانہ بنانے کے ایک آلے کے طور پر استعمال کررہی ہے اور فیکلٹی کے معاملات برسوں تاخیر کا شکار ہیں جبکہ ٹی ایس فیکلٹی کی مشابہت پر بی پی ایس فیکلٹی ممبروں کو ٹائم اسکیل پروموشن دینے کے پی اور سندھ کی کچھ یونیورسٹیوں میں بی پی ایس فیکلٹی کیلئے سلیکشن بورڈز پر پابندی ختم کرنے، خیبر پختونخواہ کی جامعات میں وائس چانسلرز اور پرو وائس چانسلرز کی فوری تعیناتی،وائس چانسلرز کی تعیناتی جامعات کے ایکٹ مطابق کی جائے اور کسی بھی قانونی عہدے پرعارضی تعیناتی نہ کی جائے اور اساتذہ اور تحقیق کاروں کے لئے 75٪ ٹیکس چھوٹ کی بحالی سمیت HEC کمیشن کی تشکیل کو غیر قانونی قرار دے دیا اسی لئے کمیشن کے ممبران کو قانون کے مطابق مقرر کیا جائے اور بین الاقوامی اسلامی یونیورسٹی اسلام آباد، گومل یونیورسٹی، کے پی، انسٹی ٹیوٹ آف اسپیس ٹکنالوجی، اسلام آباد اور پاکستان کی دیگر یونیورسٹیوں کے برخاست شدہ فیکلٹی ممبران کی بحال کیا جائے بصورت دیگر 24اگست کو ایچ ای سی کے سامنے غیر معینہ مدت کیلئے احتجاج کرینگے۔اجلاس میں HEC پالیسیوں پر تحفظات کیلئے آل پارٹیز کانفرنس کے ممبروں کو بھی پیش کرنے کا عزم کیا ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -