سماجی فاصلہ نہ رکھنے پر ماں اور بیٹے پر فائر کھول دیا گیا

سماجی فاصلہ نہ رکھنے پر ماں اور بیٹے پر فائر کھول دیا گیا
سماجی فاصلہ نہ رکھنے پر ماں اور بیٹے پر فائر کھول دیا گیا

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) امریکہ میں سماجی فاصلے کی پابندی پر عمل نہ کرنے پر ایک شخص نے ماں بیٹے کو گولیاں مار دیں۔ ڈیلی سٹار کے مطابق یہ واقعہ امریکی ریاست فلوریڈا کے شہر میامی میں پیش آیا ہے جہاں ورونیکا پینا نامی خاتون اور اس کا بیٹا ایک ہوٹل میں ٹھہرے ہوئے تھے۔ دونوں ماں بیٹا ہوٹل کی لابی میں ایک دوسرے کے بہت قریب کھڑے تھے کہ 47سالہ ملزم ڈوگلس مارکس نے ان پر چیخنا چلانا شروع کر دیا۔

رپورٹ کے مطابق اسی دوران ڈوگلس نے پستول نکالا اور ورونیکا اور اس کے بیٹے پر فائرنگ کر دی۔ اس ماں بیٹے کا تعلق نیو میکسیکو سے ہے جو سیاحت کے لیے میامی آئے ہوئے تھے۔ شدید زخمی حالت میں انہیں ہسپتال پہنچایا گیا جہاں ان کی حالت خطرے سے باہر بتائی جارہی ہے۔ایک عینی شاہد نے بتایا ہے کہ ”ماں بیٹا ہوٹل کی لابی میں کھڑے تھے کہ ملزم نے آتے ہی ان پر چیخنا شروع کر دیا کہ وہ سماجی فاصلے کی پابندی کیوں نہیں کر رہے۔ اس کے ساتھ ہی اس نے پستول نکالی اور ان پرکئی گولیاں فائر کر دیں۔“

مزید :

ڈیلی بائیٹس -