پنجاب حکومت او ر الیکشن کمیشن میں بلدیاتی انتخابات کروانے پر اتفاق

    پنجاب حکومت او ر الیکشن کمیشن میں بلدیاتی انتخابات کروانے پر اتفاق

  

 لاہور (آن لائن) پنجاب حکومت اور الیکشن کمیشن کے درمیان لاہور سمیت صوبے بھر میں بلدیاتی انتخابات کروانے پر اتفاق ہوگیا ہے۔ بتایا گیا ہے پنجاب حکومت بلدیاتی ادارو ں کا موجودہ دورانیہ جو دسمبر 2021ء میں ختم ہو جائیگاکے بعد مارچ 2022ء میں بلدیاتی انتخابا ت کروائیگی۔ انتخابات کے انعقاد کی تیاریاں شروع کردی گئی ہیں۔ انتخابات کے انعقاد پر 4 ارب روپے اخراجات آئیں گے۔ اس مقصد کیلئے محکمہ بلدیات پنجاب نے بلدیاتی رولز بھی تیار کرلئے ہیں جبکہ مارچ 2022ء میں بلدیاتی انتخابات کروانے کی حتمی تا ر یخ الیکشن کمیشن دے گا۔ دوسری طرف لارڈ میئر بلدیہ عظمیٰ لاہور کرنل (ر) مبشر جاوید نے صوبے میں بلدیاتی اداروں کے انتخابات کروانے کے حکومتی فیصلے کو وقت ٹپاؤ پالیسی تیار دیا ہے۔ انہوں نے دعویٰ کیا ہے کہ پنجاب حکومت اپنی ہی اعلان کردا تاریخ میں کبھی بھی بلدیاتی انتخابات نہیں کروائے گی ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ چونکہ سپریم کورٹ موجودہ بلدیاتی ا د ا روں کو بحال کرنے کا حکم دے چکی ہے اور پنجاب حکومت بلدیاتی ادارے بحال کرنے کے حوالے سے لیت و لعل سے کام لے رہی ہے۔ اس لئے بلدیات انتخابات کا انعقاد نا ممکن دکھائی دیتا ہے۔ انہوں نے پنجاب حکومت کیخلاف بلدیاتی اداروں کی عدم بحالی پر توہین عدالت کی ایک درخواست لاہور ہائیکورٹ میں دائر کر رکھی ہے۔ جس میں حکومتی وکیل نے بلدیاتی اداروں کی بحالی کا پلان پیش کرنے کیلئے عدالت عالیہ سے 7 ستمبر تک کی مہلت طلب کر رکھی ہے۔

بلدیا تی انتخابات

مزید :

صفحہ اول -