میرا کسی سے کوئی اختلاف نہیں ڈسپلن کا پابند ہوں،قلندر خان لودھی

میرا کسی سے کوئی اختلاف نہیں ڈسپلن کا پابند ہوں،قلندر خان لودھی

  

ایبٹ آباد (ڈسٹرکٹ رپورٹر)میرا کسی سے کوئی اختلاف نہیں پارٹی ڈسپلن کا پابند ہوں اور پارٹی قائدین کی طرف سے لگائی گئی زمہ داریاں پوری کروں گا،بطور مشیر کابینہ سے برطرفی سمجھ سے بالاتر ہے،حکومتی ترجمان کا بیانیہ خراب کارکردگی کی بنا پر عہدہ واپس لیا گیا،ترجمان صوبائی حکومت سرکاری ریکارڈ،جو کہ محکمہ مال سے متعلق ہے دیکھ لیں کہ 161فیصد محکمہ نے ریونیو کا ہدف پورا کیا ہے جس کی بنا پر وزیر اعلی خیبر پختون خوا نے ان کی سفارش پر محکمہ مال کے سینئر ممبر بورڈ آف ریونیو سمیت اہلکاروں کو تین ماہ کی بنیادی تنخوا ہ کا اعزازیہ جون 2021 میں دیا،ان خیالات کا اظہار سابق مشیر برائے وزیر اعلی محکمہ مال خیبر پختون خوا قلندر خان لودھی  نے خصوصی بات چیت کرتے ہوئے کیا،انہوں نے کہا کہ حکومتی ترجمان کے بیانیہ سے بڑا افسوس ہوا ہے کہ بہتر کارکردگی نہ دکھانے پر صوبائی کابینہ سے ان کی زمہ داریاں واپس لی گئیں جو حقیقت کے بالکل برعکس ہے،وزیر اعلی محمود خان پر مکمل اعتماد ہے،نہ گورنر شاہ فرمان سے کوئی اختلاف ہے اور نہ ہی پارٹی کے کسی مرکزی و صوبائی عہدے دار سے اختلاف نہ ہے، عید الضحی سے قبل وزیر اعلی محمود خان سے  سپیکر خیبر پختون خوا اسمبلی،صوبائی وزیر اکبر ایوب خان، ممبر صوبائی اسمبلی نذیر عباسی،رکن قومی اسمبلی علی خان جدون اور یوسف ایوب بھی موجود تھے جس میں ہزارہ ہزارہ ڈویژن کے مسائل بالخصوص ایبٹ آباد میں مون سون بارش کی تباہی کے حوالے سے بات چیت ہوئی تھی،انہوں نے کہا کہ گزشتہ دو عشروں سے حلقہ پی کے 38 کے عوام کی بھرپور خدمت کی ہے اور انہوں نے مسلسل چوتھی مرتبہ کامیابی دلائی ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -