نور مقدم کیس ، ملزم ظاہر پولی گرافک ٹیسٹ کے دوران کس طرح کی ’اداکاری‘ کرتا رہا ؟ حیران کن انکشاف 

نور مقدم کیس ، ملزم ظاہر پولی گرافک ٹیسٹ کے دوران کس طرح کی ’اداکاری‘ کرتا ...
نور مقدم کیس ، ملزم ظاہر پولی گرافک ٹیسٹ کے دوران کس طرح کی ’اداکاری‘ کرتا رہا ؟ حیران کن انکشاف 

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )پنجاب فرانزک سائنس لیب میں نور مقدم قتل کیس کے مرکزی ملزم ظاہر جعفر کا پولی گرافک ٹیسٹ مکمل کر لیا گیاہے جس کے بعد پولیس ملزم کو دوبارہ اسلام آباد لے کر روانہ ہو گئی ہے ۔

نجی ٹی وی ہم نیوز نے ذرائع کے حوالے سے کہاہے کہ ٹیسٹ سے قبل ملزم ظاہر جعفر بے ہوش ہونے کی ایکٹنگ کر تا رہا ، ظاہر جعفر کا پولی گرافک ٹیسٹ سائنس لیب کے ماہرین کی جانب سے کیا گیا جس دوران اس سے 20 سوال پوچھے گئے ، ملزم کے پولی گرافک ٹیسٹ کی رپورٹ اسلام آباد پولیس کو بھجوائی جائے گی ، لیب میں واقعہ کی سی سی ٹی وی فوٹیج کا بھی فرانزک کیا گیا ، ٹیسٹ کے دوران ملزم مختلف حیلے بہانے کر تا رہا ۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز نجی ٹی وی کی جانب سے دعویٰ کیا گیا تھا ملزم ظاہر نے نور مقدم کو قتل کرنے کے بعد سب سے پہلے اپنے والد اور پھر اپنے والد کے دوست کو فون کیا ۔ ظاہر واردات کے بعد صورتحال کو کنٹرول کرنے کیلئے اپنے دوستوں کو فون کر کے بلاتا رہا اور ان سے کہتا رہا کہ ڈاکو آ گئے ہیں اور اس کی جان کو خطرہ ہے ۔

مزید :

قومی -