راج کندرا پر زیادتی کا الزام لگانے والی اداکارہ کی اپنی ضمانت کی کوشش، عدالت نے فیصلہ سنا دیا

راج کندرا پر زیادتی کا الزام لگانے والی اداکارہ کی اپنی ضمانت کی کوشش، عدالت ...
راج کندرا پر زیادتی کا الزام لگانے والی اداکارہ کی اپنی ضمانت کی کوشش، عدالت نے فیصلہ سنا دیا
سورس: Instagram/sherlynchopraofficial

  

ممبئی (ویب ڈیسک) عدالت نے بھارتی بزنس مین راج کندرا پر جنسی زیادتی کا الزام لگانے والی اداکارہ شرلین چوپڑا کی فحش فلموں کے کیس میں پیشگی ضمانت کی درخواست مسترد کردی۔

بالی ووڈ میں فحش فلموں کے ریکٹ سے متعلق کیس میں تازہ ترین پیش رفت ہوئی ہے۔ ممبئی سیشن کورٹ نے  اداکارہ وماڈل شرلین چوپڑا کی پیشگی ضمانت کی درخواست مسترد کردی۔بھارتی میڈیا کے مطابق اداکارہ شرلین چوپڑاکو اس کیس میں شریک ملزم راج کندرا کی طرح گرفتاری کا خدشہ تھا۔ لہذا انہوں نے پورن ریکٹ کیس میں پیشگی ضمانت کے لیے سیشن کورٹ میں درخواست دائر کی تھی  تاہم ان کی درخواست مسترد کردی گئی۔ ذرائع نے دعویٰ کیا ہے اب امکان ہے کہ اداکارہ کو اس معاملے میں مزید پوچھ گچھ کے لیے طلب کیا جائے گا۔

واضح رہے کہ شرلین چوپڑا نے پورنو گرافی کیس کے سلسلے میں 27 جولائی کو ممبئی کرائم برانچ کے پراپرٹی سیل کے سامنے اپنا بیان ریکارڈ کرایا تھا جس میں انہوں نے راج کندرا پر جنسی زیادتی کا الزام لگایا تھا۔

اداکارہ شرلین چوپڑا نے اپنی شکایت میں مبینہ طور پر دعویٰ کیا ہے کہ مارچ 2019 میں راج کندرا نے ان  کے بزنس مینیجرسے کام کے سلسلے میں رابطہ کیا تھا۔ بعد ازاں ایک میٹنگ کے بعد راج بنا بتائے ان کے گھر آئے اور ان کی مزاحمت کے باوجود ان کے ساتھ غیراخلاقی حرکات کرنا شروع کردیں۔ شرلین نے اپنے بیان میں مزید کہا ہے کہ راج کندرا نے ان سے کہا تھا ان کے اور شلپا شیٹھی کے تعلقات پیچیدہ ہیں جن کی وجہ سے وہ اکثر تناؤ میں رہتے ہیں۔

واضح رہے کہ فحش فلمیں بنانے اور انہیں موبائل ایپ پر اپ لوڈ کرنے کے الزام میں راج کندرا پولیس کی حراست میں ہیں۔ ممبئی کی ایک عدالت نے بدھ کے روز ان کی ضمانت کی درخواست مسترد کرتے ہوئے انہیں 14 روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا تھا۔

مزید :

تفریح -