کورونا ویکسی نیشن کے خلاف درخواست دائر کرنا مہنگا پڑ گیا، عدالت نے درخواست گزار  کو بڑا جرمانہ کردیا

کورونا ویکسی نیشن کے خلاف درخواست دائر کرنا مہنگا پڑ گیا، عدالت نے درخواست ...
کورونا ویکسی نیشن کے خلاف درخواست دائر کرنا مہنگا پڑ گیا، عدالت نے درخواست گزار  کو بڑا جرمانہ کردیا

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن)سندھ ہائی کورٹ نے جبری کورونا ویکیسنیشن لگانے کیخلاف درخواست مسترد کرتے ہوئے   درخواست گزار کو 25 ہزار ورپے جرمانہ کردیا ۔

جسٹس محمد شفیع صدیقی اور جسٹس آغا فیصل پر مشتمل دو رکنی بینچ کے روبرو کورونا وائرس جبری ویکیسنیشن کیخلاف درخواست کی سماعت ہوئی۔جسٹس شفیع محمد صدیقی نے ریمارکس دیئے کورونا وائرس کا شکار شخص چلتا پھرتا بم ہے۔ حکومت کو صرف آپ کی صحت کی فکر نہیں۔ آپ کے ساتھ دیگر کی بھی صحت کا معاملہ ہے۔عدالت نے جبری ویکسینشن کیخلاف درخواست مسترد کردی اور درخواست گزار سہیل حمید ایڈووکیٹ پر 25 ہزار جرمانہ بھی لگا دیا۔ جسٹس محمد شفیع صدیقی نے ریمارکس دیئے کورونا کا شکار ایک شخص دو سو لوگوں کو بیمار کرے گا۔ یہ ایک خطرناک وبا بتائی جا رہی ہے۔ یہ بتائیں، جبری ویکیشین آپ کے کون سے حقوق کو متاثر کر رہی ہے؟ 

مزید :

قومی -