انٹراپارٹی انتخاب ، الیکشن کمیشن کے نوٹس پر تحریک انصاف بھی میدان میں آ گئی 

 انٹراپارٹی انتخاب ، الیکشن کمیشن کے نوٹس پر تحریک انصاف بھی میدان میں آ گئی 
 انٹراپارٹی انتخاب ، الیکشن کمیشن کے نوٹس پر تحریک انصاف بھی میدان میں آ گئی 

  

 اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)الیکشن کمیشن  کی جانب سے انٹراپارٹی انتخابات کے حوالے سے پاکستان تحریک انصاف(پی ٹی آئی)کونوٹس جاری کرنےپر پارٹی کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات احمدجواد نے میدان میں آتے ہوئے کہاہےکہ  تحریک انصاف ملک میں انٹراپارٹی انتخاب متعارف کروانے والی جماعت ہے،  قانون کے مطابق تحریک انصاف کے انٹراپارٹی انتخاب کی میعاد مکمل ہونے میں کم و بیش ایک سال کا عرصہ باقی ہے، الیکشن کمیشن کے نوٹس کا تمام پہلوؤں سے جائزہ لے رہے ہیں،الیکشن کمیشن کے نوٹس کو قانون کی روشنی میں پرکھ کر اپنے آئندہ کے لائحہ عمل کا اعلان کریں گے۔

تفصیلات کے مطابق احمد جواد نےکہاکہ انٹراپارٹی انتخاب تحریک انصاف کے آئین کا کلیدی حصہ ہے، چیئرمین عمران خان انٹراپارٹی انتخابات کے حوالے سے واضح ویژن اور دو ٹوک موقف رکھنے والے واحد لیڈر ہیں،تحریک انصاف اپنےقیام سے آج تک باقاعدگی سے انٹراپارٹی انتخاب کرواتی آئی ہے، تحریک انصاف نے انٹراپارٹی انتخاب ہی نہیں کروائے بلکہ ان کے انعقاد کے نظام میں جدت اور شفافیت کا بھرپور اہتمام کیا۔

انہوں نے کہاکہ تحریک انصاف نےاپنے جدید آئین میں انٹراپارٹی انتخاب کیلئے آزاد، بااختیار اور خودمختار الیکشن کمیشن قائم کیا، تحریک انصاف کاوفاقی الیکشن کمیشن مرکزسےلیکرنچلی ترین سطح تک جماعتی انتخاب کے انعقاد کا ذمہ دار ہے۔ احمد جواد نے کہاکہ تحریک انصاف نے جون 2017ء میں آخری انٹراپارٹی انتخاب کروایا، جون 2017ء میں کروائے گئے اس انٹراپارٹی انتخاب کی پوری کارروائی قومی میڈیا نے تفصیلاً نشر کی، انتخابی قوانین کے تحت سیاسی جماعتیں پانچ  سال کے عرصے میں انٹراپارٹی انتخاب کروانے کی پابند ہیں اور ابھی ہمارے پارٹی انتخاب میں ایک سال باقی ہے ۔

مزید :

قومی -