فیملی کورٹ، درخواست پر بچی کو دو روزکیلئے باپ کے ساتھ رہنے حکم 

  فیملی کورٹ، درخواست پر بچی کو دو روزکیلئے باپ کے ساتھ رہنے حکم 

  

لاہور(نامہ نگار)فیملی عدالت کے جج مصطفٰی یزدانی نے والد کی درخواست پر بچی کو دو روزکیلئے باپ کے ساتھ رہنے حکم دے دیاہے،درخواست گزار بچی کے والد ڈاکٹر مشتاق کی جانب سے موقف اختیارکیا گیا تھا کہ مجھے ساڑھے 3سالہ بیٹی میرب سے علیحدہ میں ملنے کی اجازت دی جائے اور بچی میرے ساتھ کچھ دن گزارے عدالت نے وکلاء کے دلائل سننے کے بعد نے بچی کو ہفتے کی صبح گیارہ بجے سے اتوار شام پانچ بجے تک والد کے ساتھ رہنے کی اجازت دے دی، لڑکی کی والدہ کا کہناہے کہ میری خاوند سے گھریلو ناچاقی کے باعث خلع ہو چکی ہے،ساڑھے تین سال کی بچی کیسے والد کے ساتھ اکیلے رہ سکتی ہے،ہم اس فیصلے کے خلاف سیشن عدالت میں اپیل دائر کریں گے۔

مزید :

علاقائی -