اغوا کے بعد خاتون سے بد اخلاقی کرنیوالے ملزم کی عبوری ضمانت کروادی

اغوا کے بعد خاتون سے بد اخلاقی کرنیوالے ملزم کی عبوری ضمانت کروادی

  

لاہور(کر ائم رپو رٹر) ہربنس پورہ کے رہائشی کی جوان سالہ بیوی کو اغوا کے بعدبد اخلاقی کر نے والے ملزم کو گرفتار کر نے کے بعد جینڈر کرائم انچارج نے بھاری رشوت لینے کے بعد رہا کر کہ عبوری ضمانت کروادی۔متاثرہ مدعی مقدمہ نے انٹی کرپشن میں انکوائری لگا دی شہریوں نے سب انسپکٹر ارم شہباز کو فوری تبدیل کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔مدعیہ فرزانہ نامی سے 50 ہزار روپے رشوت مانگی غریب مدعیہ نے 8 ہزار ارم شہباز کو دیے مگر انچارج نے ملزم سے بھا ری رشوت لیتے ہوئے ڈی این اے بھی نہ کروایا۔اور تفتیش خراب کر دی،جس پر فرزانہ بی بی نے اینٹی کرپشن میں سب انسپکٹر ارم شہباز کے خلاف درخواست دی جس کی انکوائری چل رہی ہے جبکہ ملزم کو بھی رشوت لے کر رہا کر دیا گیا مدعی آصف نے بتایا کہ میری  بیوی کو سرکاری افسر نے نوکری کا جھانسہ دے کر ہربنس پورہ سے گاڑی میں بیٹھا کر لے گیا اور سارا دن بد اخلاقی کرتے رہے جس کا مقدمہ تھانہ ہربنس پورہ میں درج ہوا جس کی تفتیش جینڈر کرائم کی انچارج مصطفی آباد ارم شہباز کے پاس لگ گئی ملزم کوگرفتار کروایا اس نے ہم سے بھی 20 ہزار لے لئے اور ملزم سے بھاری رشوت لے کر رات گئے ہی رہا کر دیا۔۔سب انسپکٹر تمام کیس شہریوں کے میرٹ پر نہیں کر رہی خراب کر رہی ہے میری سی سی پی او لاہور۔ڈی آئی جی آپریشن اور ڈی آئی جی انوسٹی کیشن سے مدد کی اپیل ہے۔

مزید :

علاقائی -