متاثرین شمالی وزیرستان امدادی رقم کی بحالی کیلئے ڈٹ گئے 

متاثرین شمالی وزیرستان امدادی رقم کی بحالی کیلئے ڈٹ گئے 

  

پشاور(سٹی رپورٹر) شمالی وزیرستان مداخیل قبیلہ کے آئی ڈی پیز امدادی رقم کی بحالی اور دیگر مطالبات کیلئے ڈٹ گئے متاثرین شمالی وزیرستان نے اس سلسلے میں صوبائی اسمبلی کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کرتے ہوئے مطالبہ کیا ہے کہ مطالبات فوری حل کئے جائیں بصورت دیگر غیر معینہ مدت کیلئے احتجاجی دھرنا جاری رہے گا واضح رہے کہ شمالی وزیرستان کے متاثرین کئی روز سے پریس کلب کے سامنے دھرنا دیئے بیٹھے ہیں۔مظاہرے میں سینکڑوں کی تعداد میں متاثرین شریک ہیں اس موقع پر مظاہرین کا کہنا تھا کہ متاثرین کو سم پر ملنے والی امدادی رقم پچھلی دو ماہ سے بند ہے جسکی وجہ سات ہزار سے زائد خاندان متاثر ہوئے ہیں جبکہ حکومتی امدادی رقم کی بندش کے باعث وہ فاقوں پر اتر آئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ گھر بار برباد ہوئے ہیں خیموں میں زندگی بسر کرنے پر مجبور ہیں مہنگائی کے اس دور میں امداد کی بندش سے مشکلات میں سنگین حد تک اضافہ ہو چکا ہے جبکہ حکومت ٹھس سے مس نہیں ہوتی جو سراسر زیادتی اور ظلم ہے انہوں نے مطالبہ کیا ہے کہ سم پر ملنے والی امدادی رقم 20ہزار فوری بحال کی جائے اور افغانستان میں موجود آئی ڈی پیز کی فوری وطن واپسی کیلئے اقدامات کئے جائیں بصورت دیگر دھرنا جاری رہے گا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -