ڈبگری میں کھدائی سے قریبی مکانوں میں دراڑیں پڑ گئیں 

ڈبگری میں کھدائی سے قریبی مکانوں میں دراڑیں پڑ گئیں 

  

پشاور(سٹی رپورٹر) چلڈرن میڈیکل سنٹر ڈبگری گارڈن کے سامنے دوکنال پرمشتمل مکان کی کھدائی کے باعث قریب عمارتوں میں دراڑیں اورپیدل چلنے والوں کیلئے راستہ کھنڈرات میں تبدیل ہوچکاہے جسکی وجہ سے ڈاکٹروں سمیت مریض اور رہائشیوں کی زندگیوں کو خطرات لاحق ہوگئے،اہالیان علاقہ کے مطابق پشاورشہرکے معروف ملبوسات سنٹرکے مالکان نے کچھ عرصہ قبل چلڈرن میڈیکل سنٹر ہسپتال کے بالمقابل دوکنال مکان خریدااوراس پر11منزلہ عمارت کی تعمیراتی کام شروع کرنے کیلئے کھدائی کی تاہم کنٹونمنٹ بورڈ کی جانب سے کھدائی پرکام رکنے کی وجہ سے گزشتہ چارمہینوں سے کام ادھوراپڑاہوا ہے دوسری جانب مکان کی 40فٹ کھدائی کے باعث پیدل چلنے والوں کیلئے مشکلات کھڑی پیدا کردی ہیں اورشام کے وقت اندھیرے ہونے پر کسی بھی کوئی جانی نقصان کااندیشہ رہتاہے اسکے علاوہ آمدورفت کاراستہ کھڈو ں میں تبدیل ہوچکاہے جس سے ٹریفک روانی بھی متاثرہورہی ہے، یاد رہے کہ ڈبگری گارڈن میں زیادہ ترڈاکٹروں کے نجی کلینکس موجود ہیں علاقہ مکینوں نے بتایاکہ کھدائی کی وجہ سے قریبی عمارتوں میں دراڑیں پڑچکی ہیں اورڈاکٹروں سمیت علاج کی غرض سے آنے والے مریض اورانکے لواحقین خودکوغیرمحفوظ تصورکررہے ہیں اس ضمن میں کئی مرتبہ کنٹونمنٹ بورڈسے رابطہ قائم کیاگیالیکن کوئی شنوائی نہیں ہورہی ہے انہوں نے ارباب اختیارسے مطالبہ کیاہے کہ خدارا مسئلے کافوری حل نکالاجائے تاکہ اہالیان علاقہ سکھ کاسانس لے سکیں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -