مشاورت کے بغیر نئی ڈرگ پالیسی نافذ نہیں کی جائے، فردوس عاشق

مشاورت کے بغیر نئی ڈرگ پالیسی نافذ نہیں کی جائے، فردوس عاشق

لاہور(کامرس رپورٹر) وفاقی وزیر برائے نیشنل ریگولیشنز اینڈ سروسز ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ فارماسیوٹیکل مینوفیکچررز اور دیگر سٹیک ہولڈرز کی مشاورت کے بغیر کوئی نئی ڈرگ پالیسی تشکیل یا نافذ نہیں کی جائے گی۔ وہ لاہور چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری میں منعقدہ اجلاس سے خطاب کررہی تھیں۔ لاہور چیمبر کے صدر عرفان قیصر شیخ نے خطبہ استقبالیہ پیش کیا۔ فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ وزارت ہربل ادویات سمیت دیگر دیسی دوائیاں کے متعلق قانون سازی کررہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت عوام کو زیادہ سے زیادہ سہولیات دینے کے لیے کوشاں ہے اور نجی شعبے بالخصوص فارماسیوٹیکل مینوفیکچررز کو درپیش مسائل حل کرنے کے لیے بھی اقدامات اٹھارہی ہے۔ وفاقی وزیر نے کہا کہ حکومت کو فارماسیوٹیکل انڈسٹری کی اہمیت سے آگاہ ہے جس کا حجم دو ارب ڈالر پر محیط ہے اور یہ چار ملین افراد کو روزگار فراہم کررہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ فارماسیوٹیکل انڈسٹری غیرملکی سرمایہ کاری کو راغب کرنے کی بھرپور صلاحیت رکھتی ہے۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہووے لاہور چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر عرفان قیصر شیخ نے کہا کہ جو نئے قواعد و ضوابط مرتب کیے جائیں وہ بہترین اور آسان ہونے چاہئیں۔

مزید : صفحہ آخر