لاہور کے معروف نجی سکول میں بچیوں کو ٹیچر اور عملے کی جانب سے حراساں کیے جانے کا انکشاف، کیمسٹری کا ٹیچر کلاس میں کیا کرتا تھا ؟ ایسی خبر سن کر والدین کے پیروں تلے زمین نکل جائے

لاہور کے معروف نجی سکول میں بچیوں کو ٹیچر اور عملے کی جانب سے حراساں کیے جانے ...
لاہور کے معروف نجی سکول میں بچیوں کو ٹیچر اور عملے کی جانب سے حراساں کیے جانے کا انکشاف، کیمسٹری کا ٹیچر کلاس میں کیا کرتا تھا ؟ ایسی خبر سن کر والدین کے پیروں تلے زمین نکل جائے

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )لاہور کے علاقے گلبر گ کی غالب مارکیٹ میں واقع مشہور نجی سکول میں طالبات کو ٹیچر اور انتظامیہ کے دیگر افراد کی جانب سے مسلسل جسمانی طور پر حراساں کیے جانے کا انکشاف ہواہے جس نے والدین کے رونگٹے کھڑے کر کے رکھ دیئے ہیں ۔

تفصیلات کے مطابق نجی سکول کی طالبات اور فارغ التحصیل طالب علموں نے سکول انتظامیہ کو چار افراد کے خلاف ہراساں کرنے کی شکایت درج کروائی ہے اور ساتھ میں ثبوت بھی پیش کیے ہیں ۔طالبات کی جانب سے چاروں افراد کی جانب سے بھیجے جانے والے بیہودہ پیغاما ت ، ویڈیوز اور تصاویر ثبوت کے طور پر پیش کی گئی ہیں ، جن چار افراد کے خلاف شکایت کی گئی ہے ان میں کیمسٹری ٹیچر زاہد وڑائچ، ایڈمن اعتزاز، اکاونٹنٹ عمر اور چوکیدار شہزاد شامل ہیں ۔

سکول انتظامیہ کا کہناہے کہ شواہد ملنے کے بعد چاروں افراد کو نوکری سے فارغ کر دیا گیاہے ،تاہم پولیس کو تاحال سکول کی جانب سے ان چار افراد کے خلاف کارروائی کی کوئی درخواست موصول نہیں ہوئی ہے ۔بتایا گیاہے کہ جب طالبات نے اپنی ایک خاتون ٹیچر سے معاملے کا ذکر کیا تو مسئلے کا حل نکالنے کی بجائے وہ طالبات کو ہی سمجھاتیں رہیں ، ایک خاتون ٹیچر نے بھی اپنے ساتھ ہونے والی زیادتی کا بتایا تھا ۔

طالبات اور فارغ التحصیل طالب علموں کی جانب سے باقاعدہ ایک کمپین شروع کی گئی تاہم یہ معاملہ کوئی ایک یا دو سال سے نہیں بلکہ 2016 سے چل رہا تھا لیکن طالبات نے اب خاموشی توڑی اور اس کے خلاف قدم اٹھایا ۔

طالبات کی جانب سے جو ثبوت پیش کیے گئے ہیں ان میں ویڈیوز ، تصاویر اور بیہودہ پیغامات بھی شامل ہیں ،طالبات نے الزام لگایا کہ ان کے کیمسٹری کے ٹیچر کلاس کے دوران لڑکیوں کو گھورتے تھے اور جسمانی اعضاءکو چھونے کی کوشش کرتے تھے اور اس کے علاوہ جب فیس یا دیگر معاملا ت کیلئے ایڈمن کے پاس جاتے تھے تو بھی نہایت شرمناک انداز میں پیش آتے تھے ۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -