بانجھ خواتین کے لیے سب سے بڑی خوشخبری، سائنسدانوں نے لیبارٹری میں مصنوعی بچہ دانی تیار کرلی

بانجھ خواتین کے لیے سب سے بڑی خوشخبری، سائنسدانوں نے لیبارٹری میں مصنوعی بچہ ...
بانجھ خواتین کے لیے سب سے بڑی خوشخبری، سائنسدانوں نے لیبارٹری میں مصنوعی بچہ دانی تیار کرلی

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) امریکی سائنسدانوں نے بانجھ پن کی شکار خواتین کے لیے ایک بڑی خوشخبری سنا دی ہے۔ میل آن لائن کے مطابق سائنسدانوں کی یہ ٹیم مصنوعی بچے دانی بنانے میں کامیاب ہو گئی ہے جس سے بانجھ خواتین کے بھی ماں بننے کی امید پیدا ہو گئی ہے۔ ویک فاریسٹ انسٹیٹیوٹ آف ری جنریٹو میڈیسن کے سائنسدانوں نے مادہ خرگوشوں میں اس مصنوعی بچے دانی کے تجربات کیے ہیں جن کے نتائج انتہائی کامیاب رہے اور ان مادہ خرگوشوں نے ان مصنوعی بچے دانیوں کے ذریعے بچوں کو جنم بھی دیا۔

تحقیقاتی ٹیم کے سربراہ انتھونی ایٹالا کا کہنا تھا کہ ”ہماری تحقیق سے ثابت ہو گیا ہے کہ انجینئرڈ یوٹرین ٹشوز کے ذریعے نارمل طریقے سے مادائیں حاملہ ہو سکتی ہیں۔ ہمارے تجربات میں مصنوعی بچے دانے کے ذریعے پیدا ہونے والے خرگوش کے بچوں اور اصل بچے دانی والے مادہ خرگوشوں کے ہاں پیدا ہونے والے بچوں کا وزن اور صحت بالکل ایک جیسی تھی۔ ہمیں امید ہے کہ اس حوالے سے مزید تحقیق سے خواتین میں مصنوعی بچے دانی امپلانٹ کرنے کی راہ ہموار ہو گی۔“

مزید :

تعلیم و صحت -