سابق آئی جی نے راؤ انوار کو کروڑوں روپے ہرجانے کا نوٹس بھیج دیا

سابق آئی جی نے راؤ انوار کو کروڑوں روپے ہرجانے کا نوٹس بھیج دیا
سابق آئی جی نے راؤ انوار کو کروڑوں روپے ہرجانے کا نوٹس بھیج دیا

  

کراچی (ویب ڈیسک) سابق آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ نے سابق پولیس افسر راؤ انور کو 5 کروڑ روپے کے ہرجانے کا قانونی نوٹس بھیج دیا. انہوں نے کہا کہ راؤ انوار کی جانب سے لگائے گئے جھوٹے الزامات کی وجہ سے میری ساکھ کو نقصان پہنچا اور اہلخانہ کو بھی ان الزامات سے خطرات کا سامنا ہے۔ اے ڈی خواجہ کے جانب سے بھیجے گئے قانونی نوٹس میں کہا گیا کہ راؤ انوار فوری طور پر معافی مانگیں اور آئندہ ایسے الزامات سے باز رہیں۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق سابق آئی جی سندھ اور موجودہ کمانڈنٹ نیشنل پولیس اکیڈمی اسلام آباد اے ڈی خواجہ نے سابق ایس ایس پی ڈسٹرکٹ ملیر راؤ انوار کو 5 کروڑ روپے ہرجانے کا قانونی نوٹس بھیج دیا جس میں انہیں عائد کردہ الزامات کی وضاحت  کے لیے 14 دن کا وقت دیا ہے۔

اے ڈی خواجہ نے رابطہ کرنے پر بتایا کہ راؤ انوار نے ایک نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں مجھ پر جھوٹے، بے بنیاد اور من گھڑت الزامات لگائے ہیں جبکہ انھوں نے میرے بارے میں توہین آمیز الفاظ بھی استعمال کیے۔

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -