نقیب اللہ پر جھوٹا کیس، راؤ انوار ریمانڈ پر پولیس کے حوالے

نقیب اللہ پر جھوٹا کیس، راؤ انوار ریمانڈ پر پولیس کے حوالے

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک )سابق ایس ایس ملیر راؤ انوار کو انسداد دہشت گردی عدالت نے نقیب اللہ پر جھوٹا مقدمہ بنانے کے کیس میں 21 اپریل تک ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا۔انتہائی سخت سیکیورٹی میں راؤ انوار کو انسداد دہشت گردی کی منتظم عدالت کے جج جسٹس عبدالمالک کے روبرو پیش کیا گیا۔ تفتیشی افسر نے عدالت سے استدعا کی کہ نقیب اللہ پر جھوٹا مقدمہ درج کرانے سے متعلق ملزم سے تفتیش کرنا ہے اس لے ریمانڈ دیا جائے۔عدالت نے تفتیشی افسر کی درخواست منظور کرتے ہوئے راؤ انوار کو 21 اپریل تک ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا۔عدالتی احاطے میں صحافیوں کے سوال پر راؤ انوار کا کہنا تھا کہ جے آئی ٹی کو بیان دے چکا ہوں اور حالات دیکھ رہا ہوں۔انسداد دہشت گردی عدالت میں نقیب اللہ قتل کیس بھی زیرسماعت ہے جس میں عدالت نے راؤ انوار کو 30 روزہ جسمانی ریمانڈ پر پولیس کی تحویل میں دے رکھا ہے۔

مزید : صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...