گرمی کی شدت بڑھتے ہی شہروں میں آٹھ، دیہی علاقوں میں دس گھنٹے کی لوڈشیڈنگ

گرمی کی شدت بڑھتے ہی شہروں میں آٹھ، دیہی علاقوں میں دس گھنٹے کی لوڈشیڈنگ

لاہور(کامرس رپورٹر)گرمی کی شدت بڑھتے ہی لوڈ مینجمنٹ کے نام پر بدترین لوڈ شیڈنگ کاسلسلہ شروع کر دیا گیا ۔گرمی کی شدت بڑھ جانے سے ملک بھر میں بجلی کی طلب میں نمایاں اضافہ ہوا ہے ۔ شہروں میں ہر گھنٹے بعد ایک گھنٹے کی لوڈ شیڈنگ شروع کر دی گئی ہے ۔ دوسری جانب ارسا کی جانب سے ڈیموں سے پانی کے اخراج میں نمایاں کمی کے باعث ہائیڈل کی پیداوار صرف ایک ہزار میگاواٹ سے بھی کم سطح پر آ گئی ہے ۔ گزشتہ روز بھی صوبائی دارالحکومت سمیت تمام بڑے شہروں میں مرمت کے نام پر درجنوں فیڈرز کو صبح نو بجے سے لیکر دوپہر تین بجے تک بند رکھا گیا جس کے باعث بڑا علاقہ تقریبا سارادن ہی بجلی سے محروم رہا ۔ ا سکے بعد بھی ان علاقوں میں شیڈول کی لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ جاری رکھا گیا ۔ گزشتہ روز شہروں میں آٹھ گھنٹے جبکہ دیہی علاقوں میں د س گھٹنے کی لوڈ شیڈنگ کی گئی۔محکمہ موسمیات نے صوبائی دارالحکومت سمیت پنجاب کے کئی علاقوں میں تیز ہواؤں کے ساتھ آندھی کی پیش گوئی کی ہے۔ ملک بھر میں موسم خشک رہنے کے باعث صوبائی دارالحکومت سمیت بیشتر علاقوں میں گرمی کی شدت مزید بڑھ گئی۔گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک کے بیشتر علاقوں میں موسم خشک رہااور آج بھی موسم خشک ہی رہے گا۔ گزشتہ روز ریکارڈ کیے گئے گرم ترین مقامات کے درجہ حرارت میں چھور، تربت، شہید بینظیر آباد 45، مٹھی، لسبیلہ 44، بدین، حیدرآباد، سکھر میں 43 سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا۔

مزید : صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...