پنجاب ٹیچرز یونین کی ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹی کے قیام کی شدید مذمت

پنجاب ٹیچرز یونین کی ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹی کے قیام کی شدید مذمت

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


لاہور( خبرنگار) پنجاب ٹیچرز یُونین پنجاب کے مرکزی سیکریٹری جنرل چوہدری تاج حیدر،چیف آرگنائزر اللہ رکھا گُجر،مرکزی صدر اللہ بخش قیصر ،میڈم سعیدہ اقبال صدر شُعبہ خواتین ،افضل ساجد،رانا عبدالستار،بشیر خاں،رانا نقیب ،مُنیر سندھو،محمد یاسین ،ڈاکٹر افضل راہی ،منیر سندھو ،محمد اسلم بٹ ،ذوالفقاراعوان ،مبارک خاں ، وحید مُراد،ملک ساجد اعوان و دیگر راہنماؤں نے حکومت پنجاب کی طرف سے گورنمنٹ سکولوں کوپرائیویٹائیزاوردانش سکول اتھارٹی کے حوالے کرنے، ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹی کے قیام،اساتذہ کو بلا جواز ناروا سزائیں دینے ،بُنیادی سہولتیں دیئے بغیرپیڈا ایکٹ کے تحت کاروائیاں کرنے کی پُر زور مذمت کی ہے ۔راہنماؤں نے کہا کہ میاں برادران اپنے ہر دور حکومت میں گورنمنٹ سکولوں کو اپنی فیکٹریوں کی طرح چلا کر اساتذہ کے ساتھ مذدوروں جیسا سلوک کرتے ہیں مگر جمہور اساتذہ پنجاب اب ہر گز ایسا نہیں ہونے دیں گے۔راہنماؤں نے کہا کہ پنجاب کے مردو خواتین اساتذہ 3جون کو 3بجے دوپہر حکومت پنجاب کے تعلیم ، تعلم اور مُعلم کُش فیصلوں کے خلاف پنجاب اسمبلی ہاؤس کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کریں گے۔


اور تاتسلیم مطالبات دھرنا دیں گے ۔ راہنماؤں نے پنجاب کے گریڈ09سے گریڈ20تک کے تمام مردوخواتین اساتذہ اور سکولوں سے تعلق رکھنے والے کلرکوں اور ملازمین درجہ چہارم سے احتجاج اور دھرنا میں شمولیت کی پُر زور اپیل کی ہے۔