کرپٹ نظام سے نجات ناگزیر‘ احتساب شریف فیملی سے شروع کرنا ہوگا‘ میاں مقصود

کرپٹ نظام سے نجات ناگزیر‘ احتساب شریف فیملی سے شروع کرنا ہوگا‘ میاں مقصود

ملتان (سٹی رپورٹر) امیرجماعت اسلامی پنجاب میاں مقصود احمدنے چیف جسٹس کے بیان ’’30سال ڈنڈے کے زور پر حکومت کی گئی،ادارے ذمہ داری پوری کرنے میں ناکام رہے‘‘پر تبصرہ کرتے ہوئے کہاہے کہ ملک میں طبقاتی تقسیم کے باعث عوام پریشان حال ہیں جمہوریت کے تسلسل کوجاری رکھ کر ہی ہم آمریت کے اثرات کوزائل کرسکتے ہیں 68برس سے ملک کو کرپٹ عناصر نے دونوں ہاتھوں سے لوٹا ہے جس کی وجہ سے خزانے خالی اورمعیشت زبوں حالی کاشکار ہے کرپشن اور اقرباء پروری کے کلچر کوختم کیے بغیر ہم ترقی نہیں کرسکتے۔انہوں نے کہاکہ محب وطن قیادت کافقدان سب سے بڑامسئلہ ہے کرپٹ اور (بقیہ نمبر4صفحہ12پر )

ظالمانہ نظام سے نجات ناگزیر ہے۔انہوں نے مزیدکہاکہ پانامالیکس نے کرپٹ عناصر کے چہرے بے نقاب کردیئے ہیں پاکستان میں کرپشن کوختم کرنے کیلئے احتساب کاعمل شریف فیملی سے شروع کرنا ہوگا۔پانامالیکس میں وزیر اعظم کے صاحبزادوں کے نام آنا تشویشناک امر ہے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر