سعودی عرب میں پولیس والے نے ایک ایسے شخص کو گرفتار کر لیا کہ خود ہی جیل جانا پڑ گیا کیونکہ ۔۔۔

سعودی عرب میں پولیس والے نے ایک ایسے شخص کو گرفتار کر لیا کہ خود ہی جیل جانا ...
سعودی عرب میں پولیس والے نے ایک ایسے شخص کو گرفتار کر لیا کہ خود ہی جیل جانا پڑ گیا کیونکہ ۔۔۔

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

ریاض (مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی عرب میں مقیم غیر ملکیوں کو اکثر قانون نافذ کرنے والوں اہلکاروں کے امتیازی سلوک کی شکایت رہتی ہے، لیکن اسی ملک میں ایک پولیس والے نے ایک غیر ملکی کو گرفتار کیا تو اس کے خلاف ایسی سخت کارروائی کی گئی کہ انصاف کی نئی مثال قائم ہو گئی۔
خلیج ٹائمز کے مطابق ایک بھارتی بزنس مین نے اپنے ایک ہم وطن کے ہاتھ اپنی دوکان بیچنے کا معاہدہ کیا تھا۔ اسے خریدار کی طرف سے 105000 درہم ایڈوانس کے طور پر دیئے گئے تھے، تاہم بعدازاں خریدار نے اپنا ارادہ ترک کر دیا۔ بھارتی بزنس مین کا کہنا ہے کہ اس نے ایڈوانس لی گئی رقم کی واپسی کیلئے کچھ مہلت کا تقاضہ کیا، جس پر اس کا ہم وطن تیار ہو گیا۔
یہ معاملات طے ہو جانے کے کچھ دن بعد اسے ایک پولیس اہلکار کا فون آیا جس نے اسے پولیس سٹیشن حاضر ہونے کو کہا۔ متاثرہ بھارتی شخص کا کہنا ہے کہ ایک پولیس لیفٹیننٹ نے اسے لی گئی رقم واپس نہ کرنے کے الزام میں گرفتار کر کے نظر بند کر دیا، اور بعد ازاں دباﺅ ڈال کر چیک پر دستخط کرائے۔ اس شخص نے اپنے ساتھ ہونے والے سلوک کی شکایت دبئی پولیس کے ہیومن رائٹ ڈپارٹمنٹ کو کر دی، اور بعدازاں پبلک پراسیکیوشن کو بھی شکایت کی۔ ان شکایات کے نتیجے میں ملزم پولیس اہلکار کے خلاف قانونی کارروائی شروع کر دی گئی اور بالآخر اسے تین ماہ کیلئے جیل بھیج دیا گیا ہے۔ پولیس اہلکار کے ساتھ ملکر بھارتی بزنس مین کے خلاف سازش تیار کرنے والے شخص کو بھی مجرم قرار دیتے ہوئے تین ماہ قید کی سزا سنائی گئی ہے ۔

مزید :

عرب دنیا -