وہ آدمی جسے وزیر اعظم نوازشریف نے گزشتہ روز ان سے جھوٹ بولتے رنگے ہاتھوں پکڑ لیا اور پھر...

وہ آدمی جسے وزیر اعظم نوازشریف نے گزشتہ روز ان سے جھوٹ بولتے رنگے ہاتھوں پکڑ ...
وہ آدمی جسے وزیر اعظم نوازشریف نے گزشتہ روز ان سے جھوٹ بولتے رنگے ہاتھوں پکڑ لیا اور پھر...

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن ) گرمیاں شروع ہوتے ہی غیر اعلانیہ و طویل لوڈشیڈنگ اور ا س پر افسران کی بے بنیاد وضاحتوں نے وزیر اعظم نوازشریف کو بھی لال پیلا کر دیا ۔گزشتہ روز کابینہ کی توانائی کمیٹی کے اجلاس کے دوران سیکرٹری پانی و بجلی یوسف نسیم کھوکھر نے ڈسٹریبیوشن کمپنیوں کی جانب سے بتائے گئے لوڈ شیڈنگ کے شیڈول پر بریفنگ دی تو وزیر اعظم نوازشریف باربارغیر مصدقہ اعدادو شمار پیش کرنے پر برہم ہو گئے ۔

’ڈان“ کے مطابق گزشتہ روز کابینہ کی توانائی کمیٹی کے اجلاس میں وزیر اعظم نوازشریف نے ملک میں طویل اور غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ کو فوری طور پر ختم کرنے اور سحر و افطار میں متواتر بجلی فراہم کرنے کی ہدایت کی اور لوڈ شیڈنگ کے حوالے سے غلط اعدادو شمار پیش کرنے والے سیکرٹری پانی و بجلی یوسف نسیم کھوکھر پر سخت اظہار برہمی کیا ۔

وزیر اعظم نے وزارت خزانہ ، پانی و بجلی اور پٹرولیم و قدرتی وسائل کو گرمی کے ساتھ ساتھ بجلی کی لوڈ شیڈنگ کے ستائے لوگوں کی مشکلات کم کرنے کیلئے 24گھنٹوں کے دوران مشترکہ پلان تیار کر نے کی ہدایت کی ۔

وزیر اعظم نے گزشتہ سال کے دوران دیہی علاقوں میں 4سے 8گھنٹے اور شہری علاقوں میں 2سے 3گھنٹے کی لوڈ شیڈنگ کے حوالے سے غلط اور گمراہ کن اعدادو شمار پر بھی افسران کو اڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا کہ ”مجھے یقین ہے ماضی میں مجھے گمراہ کیا گیا ہے“۔

انہوں نے اس موقع پر سابق سیکرٹری پانی و بجلی یونس ڈاگہا کو ہدایت کی کہ وہ ملک میں آپریشنل ہونے والے متعدد بجلی کے منصوبوں کے باوجود لوڈ شیڈنگ میں کمی نہ آنے کی وجوہات کا جائزہ لیں ۔

مزید :

قومی -