’میں کاروبار کیلئے شہرسے باہر جارہا تھا، میں نے دیکھا کہ بیگم نے 12 سالہ کزن کی فیس بک پوسٹ لائیک کی ہے، پیچھے سے کہیں بے وفائی نہ کر دے اس لئے میں نے بیگم کے جسم پر اس جگہ گوند لگادی‘ عرب شوہر کا عدالت میں بیان جس نے پوری دنیا کو ہلا کر رکھ دیا

’میں کاروبار کیلئے شہرسے باہر جارہا تھا، میں نے دیکھا کہ بیگم نے 12 سالہ کزن ...
’میں کاروبار کیلئے شہرسے باہر جارہا تھا، میں نے دیکھا کہ بیگم نے 12 سالہ کزن کی فیس بک پوسٹ لائیک کی ہے، پیچھے سے کہیں بے وفائی نہ کر دے اس لئے میں نے بیگم کے جسم پر اس جگہ گوند لگادی‘ عرب شوہر کا عدالت میں بیان جس نے پوری دنیا کو ہلا کر رکھ دیا

  

دوحہ(مانیٹرنگ ڈیسک) دنیا اکیسویں صدی میں داخل ہو چکی ہے لیکن بدقسمتی سے مشرقی معاشروں کے ایک مخصوص طبقے میں ذہنی پسماندگی کا آج بھی یہ عالم ہے کہ زمانہ جاہلیت کی یاد تازہ ہو جاتی ہے۔ قطر میں ایک خاوند کی اپنی اہلیہ کے ساتھ غیر انسانی حرکت اور اس پر عدالت کی جانب سے سنایا جانے والا فیصلہ بھی ایک ایسی ہی مثال ہے ۔

ویب سائٹ سعودی گزٹ کی رپورٹ کے مطابق 33 سالہ قطری شخص نے عدالت کو بتایا کہ وہ بیرون ملک سفر پر جانا چاہتا تھا لیکن اپنی اہلیہ کے کردار کے بارے میں شک میں مبتلا تھا۔ اسے خدشہ تھا کہ اس کی عدم موجودگی میں اہلیہ کسی سے تعلق استوار نہ کر لے لہٰذا اس کے جسم کے پوشیدہ حصے میں گوند ڈال کر اسے بند کرنے کی کوشش کی۔ بیچاری خاتون جب شدید درد میں مبتلاءہو گئی تو اسے ہسپتال لیجانا پڑ گیا، جہاں اس کے جسم کی صفائی کی گئی۔

’پلیز میری بات سنیں، میں چاہتا ہوں میری آپ سے جان پہچان ہوجائے اور پھر ہم دونوں مل کر۔۔۔‘ بازار میں عرب خاتون کو روک کر غیر ملکی نوجوان نے ایسی بات کہہ دی کہ خاتون نے فوری چپل اتارلی اور۔۔۔ ایسا کیا کہا تھا؟ جان کر آپ کو بھی اس سادگی پر ہنسی آجائے گی

ملزم نے اپنے شک کی وجہ بیان کرتے ہوئے عدالت کو بتایا کہ اس کی اہلیہ نے اس کے ایک بارہ سالہ کزن کی فیس بک پوسٹ کو لائیک کیا تھا، جس سے اسے شک پڑ گیا کہ وہ بد کردار ہے ۔ملزم کے اس بیان پر جج کا کہنا تھا کہ اس نے غلط کام کیا لیکن اس کی نیت غلط نہیں تھی ۔ جج نے ملزم کو 40 ریال (تقریباً 1 ہزار پاکستانی روپے ) جرمانہ کیا لیکن اس کی اہلیہ کو 100 کوڑے مارنے کا حکم بھی سنا دیا۔ 12 سالہ بچے کی فیس بک پوسٹ لائک کرنے پر نہ صرف خاتون کے خاوند نے اسے بدکردار قرار دے دیا بلکہ عدالت نے بھی اسے 100 کوڑوں کی سزا دینا مناسب سمجھا۔

مزید :

عرب دنیا -