محکمہ ہائر ایجوکیشن کی ناقص حکمت عملی ، سٹور روم میں پڑے 15کروڑ سے زائد مالیت کے ہزاروں لیپ ٹاپ خراب ہونے کا انکشاف

محکمہ ہائر ایجوکیشن کی ناقص حکمت عملی ، سٹور روم میں پڑے 15کروڑ سے زائد مالیت ...
محکمہ ہائر ایجوکیشن کی ناقص حکمت عملی ، سٹور روم میں پڑے 15کروڑ سے زائد مالیت کے ہزاروں لیپ ٹاپ خراب ہونے کا انکشاف

  

لاہور آئی این پی)محکمہ ہائر ایجوکیشن کی ناقص حکمت عملی سے سٹور روم میں پڑے 15 کروڑ سے زائد مالیت کے ہزاروں لیپ ٹاپ خراب ہونے کا انکشاف ہوا ہے جبکہ پی آئی ٹی بی نے خراب لیپ ٹاپس واپس لینے سے انکار کر دیا ہے ۔

پاک بھارت کرکٹ سیریز کی تما م امیدیں دم توڑ گئیں، بھارت نے بورڈ عہدیداروں کو پی سی بی حکام سے ملاقات سے روک دیا

تفصیلات کے مطابق محکمہ ہائر ایجوکیشن کے پاس 2014 کے 8 ہزار لیپ ٹاپ سٹور روم میں موجود ہیں لیکن حکومت کی جانب سے لیپ ٹاپ کی پالیسی وضع نہ ہونے کے باعث سال 2015 اور سال 2016 میں لیپ ٹاپس تقسیم نہیں کیے گئے ،ذرائع کے مطابق محکمہ ہائرایجوکیشن کی جانب سے پنجاب انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ کو ای روزگار سکیم کے لئے مذکورہ لیپ ٹاپ لینے کی پیشکش کی گئی تاہم پی آئی ٹی بی کی جانب سے چیک کرنے پر انکشاف ہوا کہ ان میں سے 3600 لیپ ٹاپس کی بیٹریاں خراب جبکہ لیپ ٹاپس آوٹ آف ڈیٹڈ ہو چکے ہیں، جس پر پی آئی ٹی بی نے خراب لیپ ٹاپس لینے سے انکار کردیا ۔ذرائع کا مزید کہناہے کہ محکمہ ہائرایجوکیشن کی جانب سے پی آئی ٹی بی کو فنڈز سے لیپ ٹاپس مرمت کرانے کی درخواست کی گئی مگر پی آئی ٹی بی نے فنڈز کی کمی کے باعث معذرت کرلی جبکہ محکمہ ہائرایجوکیشن کے پاس بھی لیپ ٹاپس مرمت کرانے کے فنڈز موجود نہیں ہیں،جس کے باعث سرکاری خزانے کر پندرہ کروڑ سے زائد کے نقصان کا سامنا ہے۔

مزید :

قومی -