سحری ،افطاری اور تراویح کی عبادات میں بھی لوڈ شیڈنگ کا عذاب ، وفاقی حکومت سندھ کے عوام کی داد رسی کے لئے اپنا تعاون بڑھائے :وزیر اطلاعات سندھ ناصر شاہ

سحری ،افطاری اور تراویح کی عبادات میں بھی لوڈ شیڈنگ کا عذاب ، وفاقی حکومت ...
سحری ،افطاری اور تراویح کی عبادات میں بھی لوڈ شیڈنگ کا عذاب ، وفاقی حکومت سندھ کے عوام کی داد رسی کے لئے اپنا تعاون بڑھائے :وزیر اطلاعات سندھ ناصر شاہ

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن)سندھ کے صوبائی وزیر اطلاعات و محنت  اور پیپلز پارٹی کے رہنما سید ناصر حسین شاہ نے کہا ہے کہ وفاقی حکومت  لوڈشیڈنگ کے معاملے پر سندھ کے عوام کی داد رسی کے لئے اپنا تعاون بڑھائے نہ کہ اس سنگین معاملے پر سیاست سے کام لیتے ہوئے غیر ضروری رکاوٹ ڈالیں ،سندھ کے لوگ بڑی اذیت میں مبتلا ہیں سحری ،افطاری تراویح کی عبادات بھی لوڈ شیڈنگ کے عذاب میں گزار رہے ہیں ،جبکہ دو روزے بھی اسی  کرب ناک عذاب میں گزارے  ہیں ،وفاق نے  جو وعدے کئے تھے ان میں سے ایک پر بھی عمل نہیں کیا، وفاق کی اس نااہلی پر سندھ کے عوام مجبور ہیں کہ وہ احتجاج کریں، لہذا اس سلسلے میں ہم نے مشترکہ طور پر احتجاج بھی کیا ،سڑکوں  پر سخت گرمی میں اپنااحتجاج ریکارڈ کروایا سندھ کے عوام اور کراچی کے شہریوں کی بھر پور نمائندگی کرتے ہوئے کے الیکٹرک،ہیسکو ،سیپکو کے خلاف سندھ اسمبلی میں تما م سیاسی جماعتوں کے ساتھ ملکر مشترکہ طور پر قرارداد منظور کی ۔

پر ہجوم پریس کانفرنس کرتے ہوئے سید ناصر حسین شاہ کا کہنا تھا  کہ ہمارے 7منصوبے جاری تھے جن کو ٹیرف کی بنیاد بنا کر بند کردیا گیا ،چار دیگر منصوبے بھی 80سے95فیصد مکمل ہیں لیکن انہیں بھی ٹیرف کا جواز بنا کر بند کردیا گیا ہے جبکہ پنجاب میں ٹیرف کا کوئی مسئلہ نہیں ، یہ سراسر نا انصافی اور زیادتی ہے ۔انہوں نے کہا کہ ماتلی میں اکیس اکیس گھنٹے کی لوڈ شیڈنگ ہورہی ہے ، نیپرا کو بھی پیمرا کی طرح ناجائز طور پر استعمال کیا جارہا ہے ویسے تو کہتے ہیں کی نیپرا خود مختار ہے لیکن بجلی کے معاملے پر اسے وفاق کے ماتحت کیا ہوا ہے ۔انہوں نے کہا کہ ٹنڈ ومحمد خان کا پاور پلانٹ شروع اور ٹیرف کا مسئلہ حل ہو جائے تو 50فیصد بجلی کا مسئلہ حل ہوسکتا ہے ۔صوبائی وزیر اطلاعات نے کہا کہ و فاق ہر مسئلہ اور معاملے پر ٹانگ اڑا رہا ہے، حال ہی میں ایک بہت بڑے سکینڈل ٹریکٹر سکیم کیس میں بھی ناجائز رکاوٹیں ڈال رہا ہے ، جو ادارے پارسائی کا ڈھونگ رچا رہے ہیں وہ بھی نیب کی طرح کیس کو کمزور کررہے ہیں ،ہمارے ادارے اینٹی کرپشن بھی شفاف طریقے سے ثبوتوں کے ساتھ معاملے کے انکوائری کررہے ہیں لیکن روڑے اٹکا کر کورٹ سے سٹے لیا جارہاہے۔صوبائی وزیر اطلاعات سید ناصر حسین شاہ نے کہا کہ کل پیپلز پارٹی چیئر مین بلاول بھٹو زرداری اور وزیر اعلیٰ سندھ نوری آباد میں100میگاواٹ کا گیس پاور پلانٹ کا افتتاح کررہے ہیں ، جس سے کراچی کے شہریوں کو مزید بجلی سہولیات میسر ہونگی ۔ایک سوال کا جواب  دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حسین نواز اور مریم صفدر صاحبہ سے ہمدردی ہے لیکن قانون کی نگاہ میں سب برابر ہیں ،پانامہ جے آئی ٹی کا فیصلہ سب کی سمجھ میں آگیا ہے کہ کیا ہونے والا ہے ؟سندھ میں خریف کے دوران پانی کی کمی کے معاملے پر کہا کہ وفاق نے ہمیشہ پانی کے مسئلے پر سندھ کے عوام کا استحصال کیا ہے ، معاہدوں سے انحراف کرتے ہوئے ہمیشہ پنجاب کے کینال زبردستی کھول دیتے ہیں جس کے سبب سندھ کو مطلوبہ پینے کا پانی بھی دستیاب نہیں ہوتا جس کے لئے مشترکہ مفادات کونسل مناسب فورم ہے لیکن اس کے بھی اجلاس منعقد نہیں کئے جارہے لیکن وزیر اعلیٰ سندھ وقتا فوقتا وفاق کے ساتھ خط وکتابت کرکے باقاعدہ سندھ کا کیس لڑتے آئے ہیں ۔

مزید :

کراچی -