بنگلہ دیش سمندری طوفان، روہنگیا مسلمانوں کے کیمپ تباہ ہوگئے

بنگلہ دیش سمندری طوفان، روہنگیا مسلمانوں کے کیمپ تباہ ہوگئے
بنگلہ دیش سمندری طوفان، روہنگیا مسلمانوں کے کیمپ تباہ ہوگئے

  

ڈھاکہ(ڈیلی پاکستان آن لائن) بنگلہ دیش میں آنے والے سمندری طوفان مورانے روہنگیا مسلمان مہاجرین کے کیمپ تباہ کر دیے ہیں جس کے باعث روہنگیا مسلمانوں کے سینکڑوں گھر تباہ ہوگئے ہیں۔

بابری مسجد کی شہادت ، 25 سال بعد ایل کے ایڈوانی سمیت بی جے پی کے 12 انتہا پسند ہندو رہنماؤں کے خلاف فرد جرم عائد

بنگلہ دیشی میڈیا کے مطابق کاکس بازار کے قریب سمندری علاقے میں دو مہاجر کیمپوں میں دس ہزار سے زائد روہنگیا مسلمانوں کو رکھا گیا تھا۔ اقوام متحدہ کے اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ چند برسوں میں تین لاکھ کے قریب روہنگیا مسلمان میانمار سے فرار ہو کر بنگلہ دیش میں پناہ لینے پر مجبور ہوئے ہیں۔آج صبح بنگلہ دیش کے ساحل سے ٹکرانے والے طوفان کی رفتار 135 کلومیٹر فی گھنٹہ تھی۔ حکام کے مطابق تین افراد ہلاک ہوئے ہیں جبکہ ساڑھے 4 لاکھ افراد کو محفوظ مقامات پر منتقل کیا گیا ہے۔اس سمندری طوفان کے نتیجے میں سب سے زیادہ نقصان روہنگیا مسلمانوں کو پہنچا ہے جن کے سینکڑوں گھر مکمل طور پر طوفان کی نظر ہو چکے ہیں۔

مزید :

بین الاقوامی -