چلی میں TDAPکی طرف سے پہلی سنگل کنٹری نمائش کمرشل قونصل مرتضیٰ صدیق کی ہٹ دھرمی کے باعث ناکامی شکار

چلی میں TDAPکی طرف سے پہلی سنگل کنٹری نمائش کمرشل قونصل مرتضیٰ صدیق کی ہٹ دھرمی ...
چلی میں TDAPکی طرف سے پہلی سنگل کنٹری نمائش کمرشل قونصل مرتضیٰ صدیق کی ہٹ دھرمی کے باعث ناکامی شکار

  

سانٹیاگو  (محسن عباس/بیوروچیف) لاطینی امریکی ملک چلی میں TDAP یعنی پاکستان ٹریڈ ڈیویلپمنٹ اتھارٹی  آف پاکستان کی طرف سے پہلی سنگل کنٹری نمائش کمرشل قونصل مرتضے صدیق خان کی ہٹ دھرمی کی وجہ سے ناکامی کا شکار۔ چلی میں مقیم پاکستانی تاجر کمیونٹی کو مایوسی جبکہ حکومت پاکستان کو کروڑوں روپے کا نقصان اٹھانا پڑا ، ایونٹ کی ناکامی کی وجہ سے پاکستان چلی آزادانہ  تجارت کا زیر تکمیل ماہدہ منسوخ ہو نے کا خدشہ پیدا ہو گیا ہے ۔ نمائش کے پہلے دن ہی کئی سٹالوں سے پاکستانی غائب نظر آئے جبکہ  اس نمائش پر حکومت پاکستان کا تین کروڑ سے زائد خرچہ آیا ہے۔

 ویڈیو دیکھیں:

نمائش کیلئے  TDAPنے ارجنٹائین کے پاکستانی سفارتخانے میں متعین کمرشل قونصلر مرتضے صدیق خان کو مقامی انتظامات کی ذمہ داری سونپی، جو پاکستان کی اہم برامدات کی بجائے پان، پراٹھے اور بریانی کے سٹالوں کے نام پر افراد چلی بلانے میں مصروف رہے۔ یہاں یہ امر بھی قابل ذکر ہے کہچار روزہ ایونٹ جو کہ 26 سے 29 مئی تک جاری رہا لیکن اس کا افتتاح ایونٹ کے تیسرے روز کیا گیا اورنمائش کے پہلے دن ہی کچھ فرضی سٹالوں سے لوگ غائب ہوگئے اور خالی سٹال منہ چڑاتے رہے۔ جبکہ TDAPکا کراچی سے آنے والا عملہ استقبالیہ کی بجائے ایک خالی سٹال پر بیٹھ کر خوش گپیوں میں مصروف پایا گیا۔ 

اور مجبورا TDAP کو خالی سٹال چلی میں مقیم مقامی پاکستانی کمیونٹی ممبران کو مفت دینے پڑے تاکہ ملک کی عزت بچ سکے۔ کمرشل قونصلرکا لگوایا ہوا بریانی کا سٹال ایک پلیٹ نو ڈالر میں بیچتا رہا جبکہ پاکستان کے مشہور سرجیکل، گارمنٹس، سپورٹس ایکسپورٹررز گاہکوں کے انتطار میں ہال میں گونجتی نصرت فتح علی خان کی قوالیاں سن کر ہوٹل لوٹ جاتے رہے۔     

ویڈیو دیکھیں:

مہندی ، پان اور پراٹھوں کے سٹالوں کے چکر میں کروڑو ں کی انویسٹمنٹ والے مینوفیکچرر گاہکوں کے ساتھ ساتھ کمرشل قونصلر کی راہ تکتے رہے۔ کمرشل قونصلر پہلے دو دن نمائش سے غائب رہے۔ جبکہ وہ اس کام کیلئے ایک اعلی اپارٹمنٹ میں ایک ماہ سے زائد عرصے سے بمعہ اپنے اہل وعیال قیام پذیر تھے جس پر حکومت پاکستان کو لاکھوں روپے کا بل آیا ہے۔

پاکستان ٹریڈ ڈیویلپمنٹ اتھارٹی کے اعلی اہلکار مشہور پاکستانی فیشن ڈیزائنر سعید اے تمیمی  کے تین  پاسپورٹ اور پانچ ہزار امریکی ڈالر ایکسپو کے پہلے دن ہی اس غیر محفوظ علاقے میں نمائش کے اندر ہی  چوری ہوگئے ۔ تمیمی پاکستان میں سیلیبرٹی ہونے کا دعوی کرتے ہیں۔

نیچے دی گئی تصویر میں TDAP ڈی جی کریم میمن اور ڈائریکٹر فاروق میمن ایک خالی سٹال میں خوش گپیوں میں مصروف ہیں۔ جبکہ استقبالیہ کے دو سٹال بغیر عملے کے منہ چڑا رہے ہیں۔

  

  

مزید :

قومی -