نجی ٹی وی کی ڈرامہ سیریل ’’کیسی عورت ہوں میں‘ ‘مقبولیت کی جانب گامزن

نجی ٹی وی کی ڈرامہ سیریل ’’کیسی عورت ہوں میں‘ ‘مقبولیت کی جانب گامزن
نجی ٹی وی کی ڈرامہ سیریل ’’کیسی عورت ہوں میں‘ ‘مقبولیت کی جانب گامزن

  

لاہور(فلم رپورٹر)نجی ٹی وی سے نشر ہونے والی نئی ڈرامہ سیریل ’’کیسی عورت ہوں میں‘ ‘ایسی ورکنگ ویمن کی گرد گھومتی ہے جو اپنی پروفیشنل لائف کے ساتھ ساتھ گھریلوں زندگی کو بھی احسن طریقے سے انجام دینے کی بھرپور کوشش کرتی ہے۔ ہمارے معاشرے میں عورت کا تعلق خواہ کسی بھی طبقے سے ہواپنی ذمہ داریاں بھرپور طریقے سے انجام دیتی ہے اور ہر مشکل اور مصیبت کا ڈٹ کر سامنا کرتے ہوئے اپنا گھر بچانے کی کوشش کرتی ہے۔ لیکن بعض صورتوں میں مرد اس کی صلاحیتوں کو بالکل نہیں مانتا اور اس کی کامیابیوں سے خوفزدہ ہوکر بات بات پر اسے ’’کیسی عورت ہو تم‘ ‘کے طعنے دے کر دبانے کی کوشش کرتا ہے۔ اس ڈرامے کی کہانی معیز اور ماہم کے گرد گھومتی ہے جنہوں نے کئی مشکلات کے باوجود اپنے گھر والوں کو شادی کے لئے راضی کیا لیکن شادی کے بعد ماہم کو اس بات کا احساس ہوتا ہے کہ معیز سنجیدگی کے ساتھ اپنی ذمہ داریاں نبھانانہیں چاہتا اور دو بچے ہونے کے باوجود اس کے مزاج میں کوئی تبدیلی نہیں آتی۔ ماہم کوکنگ کے مختلف کورسز کرتی ہے اور ایک کوکنگ چینل سے وابستہ ہوجاتی ہے۔ ماہم کا شو ہٹ ہوتا ہے اور اس کی بڑھتی ہوئی مقبولیت معیز کو خوفزدہ کر دیتی ہے اور وہ مختلف طریقوں سے ما ہم کی شخصیت کو دبانا شروع کر دیتا ہے۔

اور اسے گھریلوں ذمہ داریاں پوری نہ کرنے کے بہانے ذہنی اذیت دینے کا کوئی موقع ہاتھ سے نہیں جانے دیتا۔

تحریرصائمہ اکرم چوہدری، ہدایات فہیم برنی، پیشکش حماد عباس اور مختار احمد اور کاسٹ میں نادیہ خان‘ فیصل رحمان‘ ثانیہ شمشاد‘ مریحہ‘ روحی خان‘ دانیال ظفر‘ عادلہ سلیم‘ مریم شفیع‘ علی جوش اور دیگرشامل ہیں۔نادیہ خان نے ٹی وی ہوسٹ کا جبکہ فیصل رحمن نے ان کے ایسے شوہر کا کردار کیا ہے جسے بیوی کے ہر کام میں عیب نظرآتے ہیں۔علی جوش نے نہایت کامیاب بزنس مین کا کردار کیا ہے۔

مزید :

کلچر -