نگران وزیراعظم پر اتفاق خوش آئند‘ ماہر معاشیات زیادہ اچھا ہوتا‘ اعجازالحق

نگران وزیراعظم پر اتفاق خوش آئند‘ ماہر معاشیات زیادہ اچھا ہوتا‘ اعجازالحق

  

ڈاہرانوالہ(نامہ نگار)نگران وزیر اعظم پر اتفاق ہونا نہایت خوش آئند بات ہے اور جمہوریت کا اہم سنگ میل ہے البتہ نگران وزیر اعظم کسی ماہر معاشیات کو لگایا جاتا تو زیادہ اچھا تھا ۔پارلیمنٹ دوسری بار اپنی آئینی مدت پوری کر رہی ہے۔ملک میں جمہوریت کا تسلسل بہت بڑی تبدیلی ہے۔ہم(بقیہ نمبر26صفحہ12پر )

امید کرتے ہیں کہ نگران سیٹ اپ میں دھاندلی سے پاک صاف شفاف انتخابات کروائے جائیں گے۔اپنی پانچ سالہ کار کردگی کی بنیاد پر ہم الیکشن میں عوام کے پاس جائیں گے۔(ضیاء) لیگ کے کارکن پارٹی کا قیمتی اثاثہ ہیں الیکشن کی بھر پور تیاری کریں۔مفادات کی خاطر جماعت تبدیل کرنے والوں کو عوام مسترد کر دیں گے ۔ملک میں جمہوریت کے استحکام کے لیے دینی ،سیاسی جماعتیں ملکر کام کریں ۔ملک سے کرپشن کا خاتمہ عوام کی خواہش ہے۔سب کا بلامتیاز احتساب ہونا چاہیے۔بھارت پاکستان کو بنجر کرنے کی سازش کر رہا ہے۔کشن گنگا ڈیم کی تعمیر سندھ طاس معاہدے کی کھلی خلاف ورزی ہے۔بھارت پاکستان کے خلاف مسلسل سازشیں کر رہا ہے۔پاکستان نے ہمیشہ عالمی قوانین کی پاسداری کی ہے جبکہ بھارت مسلسل عالمی قوانین کی خلاف ورزی کر رہا ہے۔جنوبی پنجاب کی نہروں میں فصلوں کو سیراب کرنے کے لیے پانی دستیاب نہ ہونا لمحہ فکریہ ہے۔آئندہ آنے والی حکومت کو پانی کی کمی پوری کرنا سب سے بڑا چیلنج ہو گا۔ان خیالات کا اظہار مسلم لیگ(ضیاء) کے سر براہ سابق وفاقی وزیر و ایم این اے محمد اعجاز الحق نے اپنے دورہ ڈاہرانوالہ کے دوران سابق چیف انجینئر واپڈا چوہدری محمد مقصود گلابکا کی اہلیہ،محمد اعظم گلابکا کی والدہ اور چوہدری خالد محمود گلابکا کی چچی کے انتقال پر ان گھر جا کر تعزیت کرنے کے بعد مقامی لوگوں سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پر ان کے ہمراہ چیئر مین بلدیہ ہارون آباد حاجی محمد یٰسین ،ترجمان مسلم لیگ(ضیا) میاں میر احمد مستانہ سہروردی بھی ہمراہ تھے

مزید :

ملتان صفحہ آخر -