ایون فیلڈ ریفرنس :کیپٹن صفدر بیان ریکارڈ کراتے ہوئے ماں کے ذکر پر آبدیدہ ہو گئے

ایون فیلڈ ریفرنس :کیپٹن صفدر بیان ریکارڈ کراتے ہوئے ماں کے ذکر پر آبدیدہ ہو ...
ایون فیلڈ ریفرنس :کیپٹن صفدر بیان ریکارڈ کراتے ہوئے ماں کے ذکر پر آبدیدہ ہو گئے

  

اسلا م آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)احتساب عدالت میں ایون فیلڈ ریفرنس میں بیان قلمبند کراتے ہوئے مسلم لیگ ن کے رہنما اور رکن قومی اسمبلی کیپٹن صفدرآبدیدہ ہو گئے

تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نے شریف خاندان کیخلاف ایون فیلڈریفرنس کی سماعت کی، دوران سماعت بیان قلمبند کراتے ہوئے کیپٹن صفدر آبدیدہ ہو گئے،ان کا کہناتھا کہ میری جلاوطنی کی وجہ سے میری والدہ کو ہارٹ اٹیک ہوا، بیٹے کی محبت میں میری والدہ دل گرفتہ ہوئیں، مجھ سے شکایت ہے میرے چارہ گروں کو، میں زخم چھپانے کی علامت نہیں رکھتا۔

قبل ازیں عدالت نے ملزم سے استفسار کیا کہ آپ کیا سمجھتے ہیں آپ کےخلاف مقدمہ کیوں بنایا گیا جس پر کیپٹن (ر) صفدر نے اردو میں لکھا ہوا اپنا بیان عدالت کو پڑھ کر سنایا۔

جج محمد بشیر نے کیپٹن (ر) صفدر کا بیان خود لے کر دیکھا اور کہا کہ کہیں اس میں کوئی ایسی ویسی بات نہ ہو جس پر ملزم کے وکیل نے یقین دہانی کرائی کہ اس میں ایسا کچھ نہیں جس کے بعد کیپٹن (ر) صفدر نے اپنا بیان پڑھنا شروع کیا۔

ملزم نے بیان قلمبند کراتے ہوئے کہا کہ مجھے نواز شریف کے ساتھ رشتے داری کی ہر دور میں قیمت ادا کرنی پڑی، کبھی جیلوں میں ڈالا گیا، جلاوطن کیا گیا اور ملازمت سے بھی برطرف کیا گیا۔

کیپٹن (ر) صفدر نے کہا کہ نواز شریف کو محب الوطنی اور عوام دوستی کی سزا دی جاتی رہی ہے اور اب بھی انہیں سزا دینے کا سلسلہ جاری ہے، نواز شریف کے ساتھ ہونے والی زیادتیوں کے خلاف سینہ سپر رہوں گا، میرا نظریہ نواز شریف ہی ہے۔

مزید :

قومی -علاقائی -اسلام آباد -