گندم کے کاشتکاروں کو بہترین معاضہ اداکیاگیا‘سمیع اللہ چوہدری

گندم کے کاشتکاروں کو بہترین معاضہ اداکیاگیا‘سمیع اللہ چوہدری

  

لاہور(این این آئی) صوبائی وزیر خوراک سمیع اللہ چوہدری نے کہا ہے کہ گندم کے 75لاکھ میٹرک ٹن سٹاک کو ضم نہ کیا جاتا تو محکمہ خوراک اور حکومت پنجاب کو اربوں روپے کا نقصان ہونا تھا۔صوبائی وزیر نے ان خیالات کا اظہار کاشتکاروں کے نمائندو ں سے ملاقات کے دوران کیا۔انہوں نے کہا کہ کسانوں کو آج سے پہلے کھبی بھی گندم کا یہ ریٹ نہیں ملا جو اس سال دیا گیااور اس دفعہ محکمہ خوراک پنجاب نے کسانوں سے گندم کا ایک ایک دانہ خریدا ہے۔سمیع اللہ چوہدری نے کہا کہ 27مئی تک تقریبا 32لاکھ میٹرک ٹن گندم کی ریکارڈ خریداری ہوئی ہے۔انہوں نے کہا کہ 27مئی تک کسان بھائیوں کو تقریبا 103ارب روپے کی ادائیگیاں کی گئی ہیں۔ پاکستان کی تاریخ میں پہلی بار لمبی لمبی قطاروں کے بغیر کاشت کار کو ذلیل کیے بغیر آسانی سے باردانہ وصول کیا گیا۔صوبائی وزیر خوراک نے کہا کہ چھوٹے کاشتکار جن کی مقدار پیداوار 100سے 200 بوری تھی اسکو ادائیگی کیش میں کی گئی اور بڑے کاشتکاروں کو پہلی بار بروقت ادائیگی کی گئی۔

انہوں نے مزید کہا کہ شکایات سنٹرز پر 300کے قریب شکایات وصول ہوئیں جن کا فوری ازالہ کیا گیا اور گندم خریداری سنٹرز پر مشروبات اور پنکھوں کا انتظام ہر وقت رکھا گیا اور کاشتکار کی عزت نفس کا خیال رکھا گیاہے۔

مزید :

کامرس -