یوریا کھاد کی فروخت میں اضافہ، ڈی اے پی میں کمی، این ایف ڈی سی 

یوریا کھاد کی فروخت میں اضافہ، ڈی اے پی میں کمی، این ایف ڈی سی 

  

اسلام آباد(آن لائن) رواں مالی سال 2018-19ء کے ابتدائی 10 ماہ میں یوریا کھاد کی فروخت میں 7 فیصد اضافہ ہوا ہے تاہم ڈی اے پی کھادوں کی فروخت میں 15 فیصد کی کمی واقع ہوئی ہے۔ نیشنل فرٹیلائزر ڈویلپمنٹ سنٹر (این ایف ڈی سی) کی رپورٹ کے مطابق جاری مالی سال میں جولائی تا اپریل 2018-19ء کے دوران یوریا کھاد کی فروخت 4.735 ملین ٹن تک بڑھ گئی جبکہ گزشتہ مالی سال کے اسی عرصہ کے دوران 4.411 ملین ٹن یوریا کھاد فروخت کی گئی تھی۔اس طرح گزشتہ مالی سال کے مقابلہ میں جاری مالی سال کے پہلے 10 مہینوں کے دوران یوریا کھاد کی فروخت میں 0.324 ملین ٹن یعنی 7 فیصد کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے۔ این ایف ڈی سی کے اعداد وشمار کے مطابق اپریل 2019ء کے دوران اپریل 2018ء کے مقابلہ میں یوریا کھاد کی فروخت میں 22 فیصد کی کمی سے فروخت کا حجم 3 لاکھ 75 ہزار ٹن کے مقابلہ میں 2 لاکھ 92 ہزار ٹن تک کم ہو گیا۔ رپورٹ کے مطابق جاری مالی سال کے دوران ڈی اے پی کھاد کی فروخت میں 15 فیصد کی کمی واقع ہوتی ہے اور جولائی تا اپریل 2018-19ء کے دوران ڈی اے پی کی فروخت 1.83 ملین ٹن تک کم ہو گئی جبکہ گزشتہ مالی سال کی اسی عرصہ کے دوران 2.154 ملین ٹن ڈی اے پی کھاد فروخت کی گئی تھی۔

#/s#

مزید :

کامرس -