ناروا مہنگائی نے عوام کی زندگی اجیران کردی ،ریاض خان

ناروا مہنگائی نے عوام کی زندگی اجیران کردی ،ریاض خان

  

چارسدہ ( بیورورپورٹ )امیر جماعت اسلامی چارسدہ محمد ریاض خان نے کہا کہ مہنگائی نے عوام کی زندگی اجیرن بنایا ہے ۔آئے روزاشیاءخوردنوشی،پیٹرول ،گیس ،بجلی وغیرہ میں اضافہ اور انصاف حکومت کی عوام دشمن پالیسیوںکی وجہ سے قوم آج غذاب میں مبتلا ہیں ۔پاکستان میں غربت کی شرح میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے حکومت مکمل طور پر ناکام ہوچکاہیں۔پاکستان میں عملا آئی ایم ایف کی حکومت ہیں سٹیٹ بینک کے گورنر،ایف بی ار ،وزیر خزانہ اور عہددار آئی ایم ایف کے ملازمین ہیں پاکستان کی حکومت عملا آئی ایم ایف چلارہے ہیں ۔موجودہ حکومت بھی گزشتہ حکومتوں کی طرح بیرونی ایجنڈ ے پر عمل پیر ا ہیں موجودہ حکومت گزشتہ حکومتوں کی کچرا ہیں جو چوروں ،ڈاکو پر مشتمل ہیں جماعت اسلامی پانامہ لیکس میں شامل تمام چوروں کی احتساب کا مطالبہ کر رہے ہیں 2018 ءمیں الیکشن نہیں بلکہ سلیکش ہوئے 2018 ءالیکشن میں تاریخی دھاندلی ہوئی جو پاکستان کے عوام اور قوم کے ساتھ غدار ہیں جب تک پاکستان میں حقیقی معنوں میں عوام امنگوں کے مطابق حکومت قائم نہ ہوسکاتوپاکستان کی ترقی ناممکن ہیں ۔2018 ءالیکشن میں خیبر پختونخوا کی تمام سیاسی قیادت کو سازش کے تحت اسمبلی سے باہر کی اورملک کے لیے سب سے زیادہ قربانی خیبر پختونخوا کے لوگوکی ہیں۔پاکستانی کرنسی ایشاءمیں سب سے کمروز کرنسی ہیں ڈالر کی قیمت میں مسلسل اضافہ ہو رہے ہیں اور پاکستانی کرنسی مسلسل نیچے جار ہے ہیں بیرونی قوتوں پاکستان میں افغانستان جیسا جنگی اور معاشی حالت پید اکر رہے ہیں لیکن جماعت اسلامی ان کی تماعزائم ناکام بنادیں گے۔قومی اسمبلی میں 26 واں آئینی ترمیمی بل پیش کرنے والے ایک طرف اسمبلی میں ترمیمی پیش کر رہے ہیں حکومت اور تمام ہاوس اسکی حمایت کر رہے ہیں جبکہ دوسرے طرف یہاہی رکن اسمبلی کو غدار کہا جاتی ہیں فوجی چیک پوسٹ پر حملہ اچھی بات نہیں ہیں لیکن وزیرستان واقعہ کی مذمت کرتے ہیں حکومت ملک میں مشرقی پاکستان جیسے حالت پید ا کررہے ہیں۔ہم اس کی بھرپور مذمت کر رہے ہیں موجودہ حکومت نے الیکشن کی گئی وعدوں میں ابھی تک ایک وعدہ بھی پورا نہیں کی ہیں حکومت الیکشن میں وعدہ کیا تھا 90 دن میں ملک تبدیلی لائےں گے 50 لاکھ گھر تعمیر کریں گے ایک کروڑنوکری پیدا کریں گے باہر ملکوں سے لوگ نوکری کے لیے پاکستان آئے گا اور ائی ایم ایف کے پاس جانے بہتر ہوگا کہ میں خودکشی کروں لیکن دس ماہ گزارنے کے باجود ابھی تک ایک وعدہ پورا نہیں کی اجلاس میںفیصلے کیا گیا موجودہ حکومت کیطرف مہنگائی کی طوفان اور ملک کو ائی ایم ایف کو حوالہ کرنے اور حکومت کی عوام دشمن پالیسوں کے خلاف عید کے بعد بھرپور احتجاجی تحریک کا آغاز کریں گے اور 13 جون کو چارسدہ فاروق اعظم چوک میں احتجاجی دھرنا سے اپنے احتجاج کا آغاز کریں گے اس موقع پر صوبائی ڈپٹی جنرل سیکرٹری شاہ حسین ایڈووکیٹ ،قائمقام جنرل سیکرٹری ہارون خان اور دیگر عہد دار ان نے بھی خطاب کیا ۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -