فرشتہ قتل کیس تحقیقات میں نیا موڑ، ڈی این اے میں بد اخلاقی ثابت نہیں ہوئی

  فرشتہ قتل کیس تحقیقات میں نیا موڑ، ڈی این اے میں بد اخلاقی ثابت نہیں ہوئی

  

 اسلام آباد ( مانےٹر نگ ڈےسک) فرشتہ قتل کیس تحقیقات میں نیا موڑ، پولیس کا کہنا ہے کہ بچی کے ساتھبد اخلاقی کی کوشش کی گئی۔بچی کی جانب سے شناخت کرنے پر ملزم نے بچی کے پیٹ میں خنجر گھونپ دیا۔ پولیس نے امید ظاہر کی ہے کہ ملزم کو 36 گھنٹوں کے اندر پکڑ لیا جائے گا۔پولیس کو موصول پوسٹمارٹم رپورٹ میں پتا چلا ہے کہ فرشتہ کیساتھ زیادتی کی کوشش ہوئی۔ فرشتہ نےبد اخلاقی سے بچنے کے لیے مزاحمت کی۔ پولییس ذرائع کا کہنا تھا کہ فرشتہ نے ملزم کو شناخت کر لیا تھا۔ شناخت ظاہر ہونے پر ملزم نے فرشتہ کو ناف پر خنجر مارا۔ خنجر لگنے سے فرشتہ کا کافی زیادہ خون بہہ گیا۔ ڈی این اے رپورٹ میں زیادتی ثابت نہیں ہوئی۔

فرشتہ قتل کیس

مزید :

صفحہ آخر -