کمزورکودبانااور قانون کوروندناہرطاقتورکی فطرت ہے،رضا ایڈووکیٹ

کمزورکودبانااور قانون کوروندناہرطاقتورکی فطرت ہے،رضا ایڈووکیٹ

  

لاہور(پ ر)پاورگروپ آف لائرز کے چیئرمین اور انٹرنیشنل ہیومن رائٹس موومنٹ کے مرکزی سیکرٹری جنرل محمدرضاایڈووکیٹ نے کہا ہے کہ کمزورکودبانااور قانون کوروندناہرطاقتورکی فطرت ہے۔ طاقتورریاست ہویاطبقات زورآورہوں،انہوں نے کمزوروں کوبنیادی حقوق سے بھی محروم کردیا۔بدقسمتی سے طاقت نے انسانیت کے ضابطے اورکامیابی کے اصول تبدیل کرد یے۔دنیا میں جنگل کاقانون ہے، کمزوروں کی کوئی نہیں سنتا۔دنیا بھرمیں کمزوروں کودھونس اوردباؤکاسامنا ہے،جہاں جہاں مسلمان اقلیت میں ہیں وہاں وہاں ان کی حالت زارانتہائی افسوسناک ہے۔ڈاکٹرعافیہ کی طویل قیدایک بڑاسوالیہ نشان ہے۔

،انسانیت کے علمبردارکیوں خاموش ہیں۔ایک خاتون کوجرم بیگناہی کی پاداش میں مسلسل کئی برسوں سے قیدتنہائی میں رکھنا عالمی ضمیر کے چہرے پرطمانچہ ہے۔ وہ اپنے اعزازمیں ایک افطارپارٹی سے خطاب کررہے تھے۔محمد رضاایڈووکیٹ نے مزید کہا کہ ضمیر کی قیدی ڈاکٹرعافیہ نے صبرواستقامت کی تاریخ رقم کردی،انہیں قیدکرنیوالے امریکہ بہادرکوامریکہ بزدل کہنازیادہ مناسب ہوگا۔دختراسلام ڈاکٹرعافیہ کی قیدناحق سے امریکہ کامنافق چہرہ بے نقاب ہوگیا۔انہوں نے کہا کہ کاش ایٹمی پاکستان کے مصلحت پسندحکمرانوں نے ڈاکٹرعافیہ کی رہائی کیلئے آوازتواٹھائی ہوتی۔پارلیمنٹ سمیت چاروں صوبائی اسمبلیوں میں قوم کی اسیر بیٹی ڈاکٹرعافیہ کی آبرومندانہ رہائی کے حق میں قراردادیں منظورکی جائیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -