گورنرسندھ سے ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے 7 رکنی وفد کی ملاقات

گورنرسندھ سے ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے 7 رکنی وفد کی ملاقات

  

کراچی(اسٹاف رپورٹر)گورنرسندھ عمران اسماعیل سے ڈاکٹر پلیتھا ماہیپلا ( Mahipala Palitha) کی قیادت میں ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن (WHO) کے 7 رکنی وفد نے گورنرہاؤ میں ملاقات کی۔ ملاقات میں رتو ڈیرو میں ہو شربا ایڈز کے پھیلاؤ اور اس کے اصل حقائق سے متعلق رپورٹس کی تیاری میں جدید آلات کے استعمال، وجوہات کی نشاندہی اور اس کے تدارک سمیت اہمیت کے حامل دیگر امور پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔ ڈاکٹر پلیتھا ماہیپلا نے کہا کہ وفاقی حکومت کی جانب سے ایڈز کی روک تھام کے حوالے سے کئے گئے اقدامات قابل ستائش ہیں۔ ڈاکٹر اولیور مورگن کا کہنا تھا کہ سندھ کے علاقہ رتوڈیرو میں ایڈز کا ہوشربا پھیلاو دنیا میں ایک بڑا واقعہ ہے۔ جومانا ہرمیز نے بتایا کہ ڈبلیو ایچ او ٹیم تین ہفتہ میں اپنی رپورٹ تیار کرکے گورنر سندھ اور وفاقی وزیر صحت کو پیش کرے گی۔ گورنرسندھ عمران اسماعیل نے کہا کہ ہم سب کو ایڈز کے تدارک کے لیے سیاست سے بلانظر ہوکر کام کرنا ہوگا، ایڈز کی تشخیص کے لئے ٹیسٹنگ کٹس، ادویات کی فراہمی اور معاملے کی مانیٹرنگ وفاقی حکومت فراہم کررہا ہے اس ضمن میں وزیر اعظم پاکستان نے وفاقی وزیر صحت کو واضح ہدایت کردی ہے کہ صوبے کو ہر ممکن مدد فراہم کی جائے۔ گورنرسندھ نے عزم کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ہر صورت سندھ کے عوام کو اس موذی مرض سے نجات دلائیں گے۔ گورنر سندھ نے مزید کہا کہ وفاق حکومت کی درخواست پر ڈبلیو ایچ او ٹیم کی آمد کا مقصد ایڈز کے پھلاؤسے متعلق حقائق حاصل کرنا ہے، ڈبلیو ایچ او ٹیم کی سفارشات کی روشنی میں ایڈز کے تدارک میں مدد ملے گی۔ گورنر سندھ نے وفاق کی جانب سے ڈبلیو ایچ او کی ٹیم کو ہر ممکن مدد اور تعاون کی یقین دہانی بھی کرائی۔

مزید :

صفحہ اول -