اضافی کرایہ لینے والے ٹرانسپورٹر کے خلاف ٹول پلازہ پر کارروائی

اضافی کرایہ لینے والے ٹرانسپورٹر کے خلاف ٹول پلازہ پر کارروائی

  

کراچی(اسٹاف رپورٹر)سندھ کے وزیر ٹرانسپورٹ سید اویس قادر شاہ نے کہا ہے کہ سندھ حکومت نے مسافروں سے اضافی کرایہ لینے والے ٹرانسپور ٹرز کے خلاف کارروائی کا آغاز شروع کردیاہے۔ انہوں نے اپنے بیان میں کہا کہ محکمہ ٹرانسپورٹ کے افسران سندھ بھر میں پولیس کے ہمراہ مسافروں سے اضافی کرایہ لینے والی مسافر گاڑیوں کہ خلاف کارروائی کررہے ہیں، بدھ کے روز بھی کراچی ٹول پلازہ کے پاس کارروائی کے دوراں اضافی کرایہ لینے والی 52 گاڑیاں چیک کی گئیں، 38 مسافر گاڑیاں چالان، اور11 کو وارننگ دی گئی۔اویس قادرشاہ نے کہا کہ عید کے لیے کراچی سے دیگر شہروں کو جانے والے مسافروں کو 1 لاکھ 25 ہزار اضافی کرایہ واپس کروادیا گیا، اضافی کرایہ لینے والی 38 مسافر بسوں، کوچز، وین اور دیگر گاڑیوں کا 76000 ہزار روپے کا چالان کیا گیا۔اویس قادرشاہ نے کہا کہ شکارپور، جیکب آباد میں بھی اضافی کرایہ لینے والی مسافر گاڑیوں کہ خلاف کارروائی کی گئی،شکارپور میں مسافروں کو 3 ھزار اضافی کرایہ واپس کروایا گیا اور گاڑیوں پر 7 ھزار جرمانہ کیا گیا، اضافی کرایہ لینے والے پبلک ٹرانسپورٹر کو 24 گھنٹے مانیٹر کیا جارہا ہے۔وزیرٹرانسپورٹ نے کہا کہ عید پر جانے والے مسافروں سے اضافی کرایہ لینے والوں کہ خلاف سندھ بھر میں کارروائی جاری رہے گی، بجلی مھنگی ہونے سے مزید مہنگائی بڑ ہے گی حکومت کو فیصلہ واپس لینا چاہیے۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -