پی ٹی ایم کی جانب سے پاک فوج کی چوکی پرحملہ شرمناک عمل ، محمود خان

پی ٹی ایم کی جانب سے پاک فوج کی چوکی پرحملہ شرمناک عمل ، محمود خان

  

پشاور(سٹاف رپورٹر)وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان نے چارسدہ میں تین بھائیوں کے قتل کے واقعہ کا نوٹس لیا ہے اور مطلوبہ ملزمان کو فوراً گرفتار کرنے کی ہدایت کی ہے ۔ وزیراعلیٰ نے ضلع چارسدہ میں تین بھائیوں کے قتل کے دلخراش واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے انسپکٹرجنرل پولیس اور ضلعی پولیس کو مطلوبہ ملزمان کو فوری گرفتار کرنے کی ہدایت کی ہے ۔ اُنہوںنے کہاکہ کوئی بھی شخص قانون سے بالا تر نہیں ۔ ملزمان کو ہر صورت میں گرفتار کرکے قانون کے مطابق سزادی جائے گی اور مظلومین کو انصاف فراہم کیا جائے گا۔ وزیراعلیٰ نے کہاکہ ہم متاثرہ خاندانوں کے غم میں برابر کے شریک ہیں اور اُن کیلئے صبر جمیل کی دُعا کرتے ہیں۔ وزیراعلیٰ نے غمزدہ لواحقین سے دلی ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے یقین دلایا کہ ملزمان کسی صورت بھی قانون سے بچ نہیں پائیں گے اور اُنہیں اس گھناﺅنے فعل کی سزا ضرور ملے گی ۔

پشاور(سٹاف رپورٹر) وزیر اعلی خیبر پختونخوا محمود خان نے سی ایم ایچ روالپنڈی کا دورہ کیا جہاں اُنہوںنے وزیرستان میں پشتون تحفظ موومنٹ(پی ٹی ایم) کی جانب پاک فوج کی چوکی پر حملے کے نتیجے میں زخمیوں کی عیادت کی ۔ وزیراعلیٰ نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پی ٹی ایم کی جانب سے پاک فوج کی چوکی پر حملہ شرمناک عمل تھا،ہم اپنی فوج کے ساتھ کھڑے ہیں اور آئندہ ایسے واقعات نہیں ہونے دیں گے۔ وزیراعلیٰ نے واضح کیا کہ جس وقت حملہ کی اطلاع ملی وہ اُسی وقت وزیرستان کے لئے روانہ ہوگئے تھے ۔ اُنہوںنے کہاکہ 15 سال دہشت گردی کا شکار رہنے کے بعد وزیرستان امن کی جانب بڑھنے لگا ہے، خیبر پختونخوا میں ہماری حکومت ہے اور میں چیف ایگزیکٹو ہوں،پختونوں نے ہمیں ووٹ دے کر منتخب کیا۔ اگر کسی کو کوئی مسئلہ ہے توہمیں بتائے ۔محمود خان نے کہاکہ وہ خود اور اُن کا خاندان بھی دہشت گردی سے متاثررہے رہیں، پشتونوں کا دکھ درد اوروں سے بہتر سمجھ سکتے ہیں ۔ اسلئے پشتونوں کے نام پر کسی کو بھی امن کے عمل سبوتاژ نہیں کرنا چاہیئے ۔ انہوںنے کہاکہ ریاست مخالف عناصر کو آئندہ مکمل کنٹرول کیا جائے گا۔قبائلی علاقے کے عوام کی محرومیاں دور کریں گے اور اُنہیں ترقی کے قومی دہارے میں شامل کریں گے ۔وزیراعلیٰ نے علی وزیر کے پروڈکشن آرڈر سے متعلق بلاول کے مطالبے کو مسترد کر دیا۔ اُ نہوں نے کہاکہ علی وزیر کے پروڈکشن آرڈرز سے متعلق فیصلہ وفاقی حکومت کو کرنا ہے تاہم اُن کی ذاتی رائے میں ایسے عناصر کیساتھ قانون کے مطابق نمٹنا چاہئیے۔وزیر اعلی نے اس موقع پر زخمی اور جاں بحق افراد کے ورثاءکو مالی معاونت فراہم کرنے کا اعلان بھی کیا۔

مزید :

صفحہ اول -