شاہ محمود قریشی کی ترکی کے وزیر خارجہ میولودچاوش اولو سے ملاقات

شاہ محمود قریشی کی ترکی کے وزیر خارجہ میولودچاوش اولو سے ملاقات
شاہ محمود قریشی کی ترکی کے وزیر خارجہ میولودچاوش اولو سے ملاقات

  

ریاض (وقار نسیم وامق / محمد اکرم اسد) سعودی عرب کے شہر جدہ میں جاری او آئی سی وزرائے خارجہ کونسل اجلاس کے موقع پر وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی کی ترک وزیر خارجہ میولود چاوش اولو سے ملاقات۔ملاقات میں خطے کی صورتحال سمیت باہمی دلچسپی کے متعدد امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

مخدوم شاہ محمود قریشی نے کہا پاکستان اور ترکی کے تعلقات کثیر الجہتی ہیں کیونکہ یہ حکومت سے حکومت،عوام سے عوام اور دل سے دل تک ہیں ،دونوں ممالک نے مشکل وقت میں کھل کر ایک دوسرے کا ساتھ دیا۔ انہوں نے کہا کہ پلوامہ واقعہ کے بعد پاک بھارت کشیدگی کے دوران ترکی نے کھل کر پاکستان کے موقف کی حمایت کی، بہت سے بین الاقوامی مسائل کے حوالے سے پاکستان اور ترکی کے نقظہ نظر اور سوچ میں ہم آہنگی پائی جاتی ہے ۔ان کا مزید کہنا تھا کہ 2005 کا زلزلہ ہو یا 2010 کا سیلاب، ترکی ہمیشہ بھائیوں کی طرح پاکستان کی معاونت کو پہنچا ۔

ترک وزیر خارجہ میولودچاوش اولو نے کہا کہ 15 جولائی 2016 کو ترکی پر آمریت کے ناکام حملے بعد پاکستان نے سب سے پہلے ترکی کی حکومت اور صدر رجیب طیب اردگان کو اپنی حمایت کا یقین دلایا ۔ 13 دسمبر 2018 کو پاکستان کی سپریم کورٹ کا گولن کی تنظیم کو دہشت گرد قرار دینا قابل تحسین ہے ۔ فریقین نے پاکستان اور ترکی دوطرفہ تجارتی، اقتصادی اور ثقافتی تعاون بڑھانے پر اتفاق کیا۔

مزید :

عرب دنیا -