دلچسپ پہیلیاں

دلچسپ پہیلیاں

  

بے جی کی گھوڑی سواری لیوے بیٹھ

گھڑی گھڑی کھانا کھائے لمحہ لمحہ بیٹھ

سویوں کی چرخی

ہر ایک اپنے آپ کو اس سے ڈھانپے

بڑے سے بڑا پہلوان بھی تھر تھر کانپے

سردی

کھائے روٹی اور نہ روٹ

اس کا کھا جاسکے نوٹ

بٹوہ

دانائی سے دانت اس پر لگاتا نہیں کوئی

سب اس کو بھناتے ہیں مگر کھاتا نہیں کوئی

نوٹ کرنسی

ایک شخص کی عجب ہے چال

کہیں نہ دیکھا ایسا حال

قلم

چار کھونٹ چودہ چوبارے

جن میں کھیلیں دو بنجارے

مہینہ، ہفتہ

موٹا پتلا سب کو بھائے

سو میٹھو کا نام دھرائے

شکر قند

چٹے پتھر تڑ تڑ برسے

ہر اک بھاگا ان کے ڈر سے

اولے

لوگوں نے کیا بات گھڑی

چھوٹی کو کہتے ہیں بڑی

بیسن کی بڑی

گرمی میں دور بھگائے

سردی میں پاس بلائے

آگ

ایک گھڑی قدرت نے بنائی

اور بنا چابی کے چلائی

انگلی اس کی ٹک ٹک سن لے

کانوں تک آواز نہ آئی

نبض

کبڑی ماں نے بچے پالے

دھکے دے کر گھر سے نکالے

تیر کمان

ان کو دودھ بھی پلاتا ہوں

کھاتا ہوں کپڑوں کا گوشت

چمگادڑ

ایک بیٹی ایک امی جان

روز پکاتی ہیں پکوان

امی تو ہر چیز چھپائے

بیٹی سب کو بانٹ کھلائے

ہنڈیا اور روٹی

مزید :

ایڈیشن 1 -