مہنگائی، ملازمین کی تنخواہوں میں 50فیصد اضافہ کیاجائے،ریلوے پریم یونین

    مہنگائی، ملازمین کی تنخواہوں میں 50فیصد اضافہ کیاجائے،ریلوے پریم یونین

  

ملتان(نمائندہ خصوصی)ریلوے پریم یونین سی بی اے ملتان ڈویڑن کے عہدیداروں نے وفاقی حکومت سے مطالبہ کیا ھے کہ ملک میں بڑھتی ہوئی مہنگائی کے پیش نظر رواں بجٹ میں چاروں ایڈھاک ریلیف الاؤنسز کوضم کرکے ملازمین کی تنخواہوں میں %50 اضافہ کیا جائے پریم یونین ملتان کے صدر رانا شریف جنرل سیکرٹری ایوب مغل سینر نائب صدر نور آصف (بقیہ نمبر34صفحہ6پر)

اعوان مکینکل کے چئیر مین اویس حمید نائب صدر ظفر خان لودھی رابطہ سیکرٹری شیخ نعیم پریس سیکرٹری محمد اشفاق وسیم شاہ عابد حسین شہزاد ودیگر نے کہا ھے کہ حکومت تنخواہوں میں اضافے کے ساتھ ساتھ ھاوس رینٹ میں بھی اضافہ کرے کیونکہ موجودہ ھاوس رینٹ 2008 کے مطابق دیا جا رھا ھے جس کے مطابق گریڈ 1 کے ملازم کو 1337 روپے مل رھے ھیں اس رقم میں بمشکل ایک دن کیلئے کمرہ کرائے پر ملتا ہے اسی طرح میڈیکل الاؤنس 1500 روپے ھے جو موجودہ مہنگاء کے دور میں نہ ھونے کے برابر ھے ان کا کہنا ھے کہ میڈیکل الاؤنس کم از کم 5000 روپے کیا جائے اسی طرح تمام وفاقی ملازمین کو بلا تفریق یوٹیلٹی الاؤنس دیا جائے ان کا مزید کہنا ھے کہ موجودہ ہوشربا مہنگاء کے دور میں نوبت فاقہ کشیوں تک پہنچ چکی ھے اور غریب ملازمین کیلئے دو وقت کی روٹی کا حصول ناممکن ھو گیاھے مزدورں کے بچے اس قلیل تنخواہ میں نہ تو پیٹ بھر کر روٹی کھا سکتے ھیں اور نہ تعلیم حاصل کر سکتے ھیں ھم جناب صدر پاکستان وزیراعظم صاحب اور وفاقی وزیر خزانہ سے پر زور مطالبہ کرتے ھیں کہ وہ موجودہ بجٹ میں ملازمین کی تنخواہوں میں 50%اضافہ کرائیں تاکہ لاکھوں مزدور فاقہ کشی سے محفوظ رھ سکیں۔

تنخواہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -