کراچی کے سول ہسپتال پر رات گئے درجنوں لوگوں نے دھاوابول دیا،انتہائی افسوسناک واقعہ

کراچی کے سول ہسپتال پر رات گئے درجنوں لوگوں نے دھاوابول دیا،انتہائی ...
کراچی کے سول ہسپتال پر رات گئے درجنوں لوگوں نے دھاوابول دیا،انتہائی افسوسناک واقعہ

  

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن)کراچی کے سول ہسپتال پر جمعہ کو رات گئے لوگوں کی بڑی تعداد نے دھاوا بول دیا اور ڈیوٹی پر موجود طبی عملے کو تشدد کا نشانہ بنایا۔ ایکسپریس ٹربیون کے مطابق لوگوں نےہسپتال پر اس وقت دھاوا بولا جب وہاں کوروا وائرس سے متاثرہ ایک مریض دم توڑ گئے۔

انتظامیہ کے مطابق 70سے زائد افراد رات گئے ہسپتال میں داخل ہوئے اور ایمرجنسی وارڈ میں موجود میت کو اپنے ساتھ لے گئے۔اس دوران انہوں نے طبی اہلکاروں کو ہراساںکیا اور انہیں تشدد کانشانہ بنایا۔

ڈاکٹرز نے دعویٰ کیا ہے کہ مریض کا علاج سٹینڈرڈ آپریٹنگ پروسیجرز (ایس او پیز)کے مطابق کیاگیا۔ہسپتال کے ایم ایس ڈاکٹر خادم قریشی نے واقعہ کی تصدیق کرتے ہوئے ایکسپریس ٹربیون کو بتایا کہ پولیس کو واقعہ میں ملوث افراد کے خلاف ایف آئی آر درج کرنے کا کہہ دیا گیا ہے۔ڈاکٹرز تحفظ مانگتے ہیں اس طرح کی صورتحال میں ان کے لئے کام کرنا مشکل ہے۔

وقوعہ کے وقت ڈیوٹی پر موجود ایک اور ڈاکٹرنے بتایا ہے کہ یہ واقعہ گزشتہ شب 11بجے پیش آیا۔ انہیں اور ان کے دیگر ساتھیوں کو تشدد اور توہین کا نشانہ بنایا گیا۔ اور یہ رواں ہفتے میں تیسرا واقعہ ہے۔

Officially we are stupid.

Karachi civil Hospital last night. pic.twitter.com/AmEkKKHNcf

— U.A.S (@Usmanalisayyed) May 30, 2020

ڈاکٹرز کا دعویٰ ہے کہ پولیس ہسپتال کے گیٹ پر تعینات ہے مگر اس نے طبی عملے کی کوئی مدد نہیں کی، تاحال ایک بھی شخص کو گرفتار نہیں کیاگیاہے۔ڈاکٹرز کی حفاظت کیلئے سندھ رینجرز کو تعینات کیاجائے۔وقوعے کی ویڈیو بھی سوشل میڈیا پر وائرل ہورہی ہے۔

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -