بجٹ میں کوئی نیا ٹیکس لگایا جائیگا نہ کسی کا دباؤ قبول کریں گے، فرخ حبیب 

بجٹ میں کوئی نیا ٹیکس لگایا جائیگا نہ کسی کا دباؤ قبول کریں گے، فرخ حبیب 

  

فیصل آباد/مکوآنہ (این این آئی)وزیر مملکت اطلاعات و نشریات فرخ حبیب نے کہا کہ بجٹ-22 2021ء میں کوئی نیا ٹیکس نہیں لگایا جا ئے گا بجٹ کے حوالے سے کسی کادبا ؤقبول نہیں کیاجائے گا تمام فیصلے عوام کے مفاد میں کئے جائیں گے زیادہ سے زیادہ زرمبادلہ پاکستان لانے کیلئے ویلیو ایڈڈ ٹیکسٹائل میں اضافہ کرنا ہوگا سابق چیف جسٹس آف پاکستان ثاقب نثار کے دور میں جمع کئے جانے والے ڈیم فنڈ کا پیسہ موجود ہے جسے ڈیموں کی تعمیر پر ہی خرچ اور اس کے ایک ایک پیسے کا آڈٹ ہوگا۔فیصل آباد میں میڈ یا سے گفتگو کر تے ہو ئے انہوں نے کہا کہ نئے مالی سال کا بجٹ عوام دوست وبزنس فرینڈلی ہوگانئے مالی سال کے بجٹ میں ہاسنگ صحت انصاف کارڈکامیاب جوان پروگرام سمیت دیگر فلاحی منصوبوں کیلئے بھرپور فنڈز مختص کئے جائیں گے انہوں نے کہا کہ ویلیو ایڈڈ ٹیکسٹائل اور ایکسپورٹ سیکٹر کی ترقی حکومت کی اولین ترجیح ہے کیونکہ ملک میں صنعتی سرگرمیوں کے فروغ سے معاشی خوشحالی آئے گی اور روزگار کے مواقع بڑھیں گے حکومت کی مثر پالیسیوں کے باعث برآمدات کو فروغ مل رہا ہے اورٹیکسٹائل کے شعبہ میں واضح بہتری آئی ہے انہوں نے کہا کہ ملک کی معاشی سرگرمیوں میں فیصل آباد کی ٹیکسٹائل صنعت کا اہم کردار ہے اور فیصل آباد کی پہچان بھی ٹیکسٹائل انڈسٹری کے حوالے سے ہے جسے ہم مزید بڑھائیں گے ہماری کوشش ہے کہ شرح نمو 6فیصد تک لے جائیں تاکہ روزگار میں اضافہ ہوجبکہ بہترین معاشی پالیسیوں سے ملک کی اقتصادی صورتحال بہت بہتر ہوئی اور آنے والے دنوں میں اس میں مزید بہتری بھی آئے گی انہوں نے کہا کہ زرعی اجناس کے مناسب نرخ مقرر ہونے سے کاشتکار طبقہ خوشحال ہوااور پاکستان کی تاریخ میں پہلی بار گندم کی قیمت 1800 روپے فی من ہونے سے کاشتکاروں کو 500 ارب روپے کی اضافی آمدنی اور دیگر تمام فصلات میں 1100 ارب کی اضافی رقم حاصل ہوئی جن سے ٹریکٹروں، کاروں، موٹر سائیکلوں اور زرعی مشینری کی خرید و فروخت میں اضافہ ہوا۔

فرخ حبیب

مزید :

صفحہ آخر -