یمر گرہ کورونا کیسز میں کمی سیاسی سماجی اور طلبہ تنظیموں کی جانب سے احتجاج کی دھمکی

 یمر گرہ کورونا کیسز میں کمی سیاسی سماجی اور طلبہ تنظیموں کی جانب سے احتجاج ...

  

 تیمرگرہ (بیورورپورٹ) دیرلوئیرمیں کورونا مثبت کیسز کی شرح 3.2ہو نے کے باوجود تعلیمی اداروں کی مسلسل بند ش پر سیاسی سماجی اور طلبہ تنظیموں نے احتجاجی تحریک شروع کرنے کی د ھمکی دیدی،تفصیلات کے مطابق کورونا کی تیسری لہر کے دوران دیرلویر میں مثبت کیسز کی شرح خطرناک حد تک بڑ ھ جانے سے قومی سطح پر تشویش کی لہر ڈوڑ گئی تھی تاہم این سی او سی کی جانب سے 5فیصد سے کم مثبت کیسز والے اضلاع میں تعلیمی ادارے کھولنے کے اعلان کے بعد صوبے کے26اضلاع میں تعلیمی سرگرمیاں دوبارہ شروع کرانے کا فیصلہ کیا گیا ا س حوالے سے گزشتہ دو دنوں سے دیرلویر میں مثبت کیسز کی شرح میں 3فیصد سے کم ہونے کے باوجود ضلع بھر میں تاحال تعلیمی سرگرمیاں شروع کرانے کا اعلان نہ ہوسکا،علاوہ ازیں تمام تر کاروباری سر گرمیاں بحال اور این سی او سی کی جانب سے سیاحت کے شعبہ کی فعالیت کے باوجود صرف تعلیمی اداروں کی بندش پر مقامی سیاسی،سماجی راہنماوں نے سخت تشویش کا اظہار کر تے ہو ئے فوری طور پر تعلیمی اداروں کی بند ش ختم کرنے کا مطالبہ کیا ہے 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -