کورونا وائرس کی ایک اور خطرناک قسم دریافت ،یہ کس ملک میں سامنے آئی ؟ تشویشناک خبر آگئی

کورونا وائرس کی ایک اور خطرناک قسم دریافت ،یہ کس ملک میں سامنے آئی ؟ تشویشناک ...
کورونا وائرس کی ایک اور خطرناک قسم دریافت ،یہ کس ملک میں سامنے آئی ؟ تشویشناک خبر آگئی

  

ہانوئی(ڈیلی پاکستان آن لائن )کورونا وائرس میں جنیاتی تبدیلیاں ہو رہی ہیں جس کی وجہ سے نئی نئی اقسام سامنے آرہی ہیں ۔اب ویتنام میں بھی کورونا وائرس کی نئی قسم کا انکشاف ہوا ہے جس کے بارے میں کہا جا رہا ہے کہ یہ بہت خطرناک ہے ۔

 ویت نام کے وزیر صحت نگیوین ٹہانا نے 29 مئی کو ایک اجلاس میں بتایا کہ سائنسدانوں نے کورونا وائرس سے حال ہی میں متاثر ہونے والے مریضوں کے جینیاتی سیکونسنگ کے دوران اس نئی قسم کو دریافت کیا۔انہوں نے مزید بتایا کہ یہ نئی قسم بہت زیادہ متعدی نظر آتی ہے اور دیگر اقسام کے مقابلے میں زیادہ آسانی سے پھیل سکتی ہے۔

ان کا کہنا تھا ویت نام نے کووڈ 19 کی ایک نئی قسم کو دریافت کیا ہے جس میں بھارت اور برطانیہ میں دریافت ہونے والی اقسام کی میوٹیشنز کا امتزاج موجود ہے۔ویت نام کے وزیر صحت نے بتایا 'بنیادی طور پر یہ بھارت میں دریافت ہونے والی قسم ہے جس میں ایسی میوٹیشنز موجود ہیں جو برطانیہ میں دریافت ہونے والی قسم میں دیکھنے میں آئی، اس وجہ سے یہ نئی قسم بہت خطرناک ہے۔لیبارٹری میں ہونے والی تحقیق میں معلوم ہوا کہ یہ نئی قسم بہت تیزی سے اپنی نقول بنانے کی صلاحیت رکھتی ہے۔انہوں نے کہا کہ اس سے یہ ممکنہ وضاحت ہوتی ہے کہ ویت نام میں حال ہی میں اچانک کووڈ کے کیسز میں تیزی سے اضافہ کیوں ہوا ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -