تیز گام حادثہ،آزادانہ انکوائری کیلئے وزیر ریلوے کیخلاف درخواست

تیز گام حادثہ،آزادانہ انکوائری کیلئے وزیر ریلوے کیخلاف درخواست

  



اسلام آباد (این این آئی)اسلام آباد ہائی کورٹ نے تیزگام ریلوے حادثہ کی آزادانہ انکوائری کیلئے وزیر ریلوے شیخ رشید کے خلاف درخواست پر سماعت کے دور ان وزارت داخلہ اور وزارت ریلوے سے تفصیلی جواب طلب کر لیا۔جیورسٹ فاؤنڈیشن کی درخواست پر سماعت جسٹس محسن اختر کیانی نے کی۔ دوران سماعت تیزگام حادثے کی انکوائری رپورٹ بھی آئندہ سماعت پر طلب کرلی گئی،وزارت داخلہ نے جواب جمع کرانے کے لیے وقت مانگ لیا۔عدالت نے وزارت ریلوے کے وکیل سے استفسار کیا کہ کیا آپ نے حادثہ کے شکار لوگوں کو معاوضہ دیا؟وکیل وزارت ریلوے نے کہاکہ رپورٹ قائمہ میں پیش کی ہے،ابھی انکوائری چل رہی ہے۔ جسٹس محسن اختر کیانی نے استفسار کیا کہ کیا شیخ رشید بطور وزیر معاوضے کا اعلان کر سکتے ہیں،کون سا قانون ہے جس کے تحت وزیر نے یہ معاوضہ دینے کا اعلان کیا۔جسٹس محسن اختر کیانی نے ریمارکس دیئے کہ کیا وزیر ریلوے اپنی جیب سے یہ معاوضہ دیں گے۔ وکیل وزارت ریلوے نے کہاکہ وفاقی حکومت نے تیز گام حادثے کے شکار لوگوں کو معاوضہ دینا ہے۔ وکیل درخواست گزار حنیف راہی نے کہاکہ وزیر ریلوے شیخ رشید کے ماتحت آزادانہ انکوائری نہیں ہو سکتی۔ جسٹس محسن اختر کیانی نے کہاکہ بتائیں متاثرین کے لئے وفاقی حکومت نے ابھی تک کیا کیا؟۔ معاوضہ کتنا دیا اور کب دیا،زخمیوں کی کیا صورت حال ہے،عدالت نے جواب طلب کرلیا۔ عدالت نے وزارت داخلہ کو جواب جمع کرانے کی ہدایت کرتے ہوئے کہاکہ مستقبل میں ایسے واقعات روکنے کے لیے کیا کیا؟۔ عدالت نے کہاکہ پوسٹ مارٹم رپورٹ کیا ہے اور کیا واقعے کی ایف آئی آر درج ہوئی،جواب جمع کرائیں۔بعد ازاں کیس کی مزید سماعت 13 جنوری تک ملتوی کردی گئی۔

 تیزگام حادثہ 

مزید : صفحہ آخر