ٹانک،ریجنل ٹرینیگ فار کورٹ آئی ٹی سکلز کی تربیتی ورکشاپ کا انعقاد

  ٹانک،ریجنل ٹرینیگ فار کورٹ آئی ٹی سکلز کی تربیتی ورکشاپ کا انعقاد

  



ٹانک(نمائندہ خصوصی)پشاور ہائی کورٹ کے چیف جسٹس کے احکامات کی روشنی میں اور یو این ڈی پی کے زیراہتمام جنوبی وزیرستان کی ضلعی عدلیہ کے اہلکاروں کی صلاحیتوں کو موجودہ دور کے تقاضوں کے مطا بق بروئے کار لانے کے لئے ریجنل ٹرینیگ فار کورٹ آئی ٹی سکلز کی دو روزہ تربیتی ورکشاپ کا انعقاد پشاور ہائی کورٹ کے آئی ٹی اکیسپرٹ نے ضلعی عدلیہ کے اہلکاروں کو تربیت فراہم کی ڈسٹرکٹ سیشن جج جنوبی وزیرستان کلیم ارشد نے اختتامی تقریب کے دوران اہلکاروں میں سرٹیفیکٹیس تقسیم کیں جوڈیشل کمپلیکس جنوبی وزیرستان کی ضلعی عدلیہ کے اہلکاروں کو تربیت فراہم کرنے کے لئے دوروز ورکشاپ کا انعقاد کیا گیاتھا جس میں ضلعی عدلیہ سے تعلق والے اہلکاروں سمیت سیشن جج جنوبی وزیرستان کلیم ارشد،ایڈیشنل سیشن جج شوکت احمد خان،سینئر سول جج اسد اللہ خان،سول جج شکیل ارشد اور سول جج حفیظ اللہ نے شرکت کی دو روزہ ورکشاپ کے دوران پشاور ہائی کورٹ کے آئی ٹی ایکسپرٹ آصف علی شاہ اور فہیم نے اہلکاروں کو تربیت فراہم کی اختتامی تقریب سے سیشن جج جنوبی وزیرستان کلیم ارشد نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ قبائلی عوام کو قانون کے مطابق انصاف کی فراہمی کے لئے ضلعی عدلیہ سے تعلق رکھنے والے ججز اپنے فرائض ایمانداری اور جانفشانی کے ساتھ سر انجام دے رہے ہیں تاکہ شہریوں کو بروقت انصاف کی فراہمی کو یقینی بنایا جا سکے مذکورہ دو روزہ تربیت کا مقصد ضلعی عدلیہ کے اہلکاروں کو اس قابل بنانا ہے کہ وہ موجودہ دور کے تقاضوں کے مطابق عدلیہ میں اپنے فرائض سر انجام دے سکیں انہوں نے کہا کہ تربیت کے دوران اہلکاروں کو انفارمیشن ٹیکنالوجی کے بارے میں آگاہی فراہم کی گئی جنوبی وزیرستان کی ضلعی عدلیہ سائلین کی سہولت کے لئے جلد سی ایف ایم آئی ایس سسٹم متعارف کر ا رہی ہے جس کے لئے تمام کام مکمل کیا جا چکا ہے مذکورہ سسٹم سے عدالت کی روز مرہ کی کاروائی خود بخود اپ ڈیٹ ہوگی اور ہائی کورٹ ضلعی عدلیہ کی کاروائی کی براہ راست نگرانی کر سکے گی سی ایف ایم آئی ایس سسٹم کے شروع ہونے سے جنوبی وزیرستان قبائلی اضلاع میں پہلا جبکہ کے پی میں چوتھا ضلع شمار ہو گا انہوں نے بتایا کہ شہریوں کو اپنے حقوق کے متعلق آگاہی حاصل کرنے کے لئے ضلعی عدلیہ کی اپنی ویب سائیڈ جلد لانچ کی جارہی ہے جو اپنی نوعیت کی پہلی ویب سائیڈ ہو گی جس کے ذریعے فریقین مقدمہ اور بشمول سرکاری محکمہ جات کو مقدمات کی ساری نقول بذریعہ ای میل جبکہ وکلاء کو کیس کی تاریخ سمیت دیگر معلومات بذریعہ ایس ایم ایس فراہم ہو نگی تقریب کے اختتام پر انہوں نے تربیت مکمل کرنے والے اہلکاروں میں جبکہ ماڈل کورٹس میں بہترین کا رکردگی دکھانے والے ججز اور ان کے اسٹاف میں چیف جسٹس آف پاکستان اور چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ کی جانب سے تعریفی سرٹیفیکٹس تقسیم کی گئیں۔۔۔

مزید : پشاورصفحہ آخر