محکمہ ایکسائز‘ ٹوکن ٹیکس وصولی کی مد میں کروڑوں روپے خورد برد کرنیکا انکشاف

    محکمہ ایکسائز‘ ٹوکن ٹیکس وصولی کی مد میں کروڑوں روپے خورد برد کرنیکا ...

  



ملتان (نیوز رپورٹر) محکمہ ایکسائز ٹیکسیشن اینڈ نارکوٹکس ملتان میں بذریعہ پوسٹ آفسز ٹوکن ٹیکس وصولی کی مد میں کروڑوں روپے کی خوردبرد کا انکشاف ہوا ہے کرپشن میں ملوث اہلکاروں (بقیہ نمبر10صفحہ12پر)

نے ریکارڈ بھی غائب کردیا ہے جبکہ نیب نے بھی ٹوکن ٹیکس کا ریکارڈ دستیاب نہ ہونے پر مکمل انکوائری کرنے سے معذرت کرتے ہوئے ریکارڈ واپس جنرل پوسٹ آفس کو بھجوا دیا ہے تفصیل کے مطابق محکمہ ایکسائز ملتان نے پوسٹ آفسز کے ذریعے ٹوکن ٹیکس وصولی میں مالیخوردبردکی چھان بین کے لئیے ای ٹی او موٹر برانچ عارف شیخ کی سربراہی میں پانچ رکنی کمیٹی تشکیل دی گئی لیکن مذکورہ کمیٹی کو بھی دو ہفتے گزرنے کے باوجود بوگس ٹوکن اور غائب شدہ ریکارڈ تک رسائی میں ناکامی کا سامنا کرنا پڑرہا ہے موٹر برانچ میں ٹوکن ٹیکس فیڈنگ اور پوسٹ آفس میں جمع کرائے گئے ٹوکن ٹیکس کو کنفرم کرنے پر مامور عملہ اور پوسٹ آفس اہلکاروں کی باہم ملی بھگت آڑے آگئی ہے فیڈنگ پر مامور عملہ انکوائری کمیٹی کو وہ ریکارڈ فراہم کررہا ہے جس کی ادائیگی ہوچکی ہے جبکہ بوگس ٹوکن ٹیکس کا ریکارڈ فراہم کرنے سے گریزاں ہے ذرائع کے مطابق نیب کو فراہم کئیے گئے ریکارڈ کی واپسی سے مزید بوگس ٹوکن ٹیکس کا ریکارڈ سامنے آیا ہے جس کے بعد انکوائری کا دائرہ مزید وسیع کردیا گیا ہے یہ بھی اطلاعات ہیں کہ بعض بااثر و سیاسی اثر رسوخ رکھنے والوں کی جانب سے کمیٹی پر دباو ڈالنے کی کوشش کی جارہی ہے تاکہ کروڑوں روپے کی خرد برد کے ماسٹر مائنڈ اور ایکسائز آفس ملتان میں بیٹھے سہولت کار بے نقاب نہ ہوں۔

خوردبرد

مزید : ملتان صفحہ آخر