نشتر میں ٹیچنگ فیکلٹی کا شدید بحران‘ 11دسمبر سے انٹرویوز شروع ہونیکا امکان

    نشتر میں ٹیچنگ فیکلٹی کا شدید بحران‘ 11دسمبر سے انٹرویوز شروع ہونیکا ...

  



ملتان(وقائع نگار))نشتر میڈیکل یونیورسٹی و کالج میں ٹیچنگ فیکلٹی کہ شدید کمی کا معاملہ سامنے آیا ہے،پی ایم اے کی جانب سے مسلسل آواز اٹھانے پر انتظامیہ کو ہوش آ گیا،نشتر میڈیکل یونیورسٹی کے وائس چانسلر نے سیکرٹری ہیلتھ کو مراسلہ بھجوا دیا،11 اور 12 دسمبر کو انٹرویو کئے جائیں گے(بقیہ نمبر54صفحہ7پر)

،تفصیل کے مطابق نشتر میڈیکل یونیورسٹی و کالج میں مختلف شعبہ جات میں پروفیسر اسسٹنٹ پروفیسر،ایسوسی ایٹ پروفیسرز کی 50 کے قریب آسامیاں ایک سال سے زائد گزر جانے پر بھی خالی ہیں،گزشتہ ایک سال سے پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن کی جانب سے مسلسل آواز بلند کرنے پر نشتر میڈیکل یونیورسٹی انتظامیہ کو ہوش آ گیا ہے،وائس چانسلر نشتر میڈیکل یونیورسٹی پروفیسر ڈاکٹر مصطفیٰ کمال پاشا نے اس حوالے سے 11 اور 12 دسمبر کو انٹرویو کروا کے بھرتیاں کرنے کا عندیہ دیتے ہوئے، سیکرٹری ہیلتھ پنجاب کو باقاعدہ مراسلہ بھجوا دیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ شیڈول کے مطابق 11 اور 12 دسمبر کو بھرتیاں کرنے کیلئے انٹرویو کروانے ہیں اس کیلئے پنجاب حکومت اپنے نمائندے نامزد کرے،تاکہ انٹرویو شیڈول کے مطابق کروا کر فوری ٹیچنگ فیکلٹی کی کمی کو دور کیا جا سکے،ادھر پی ایم اے کی ڈیمانڈ پر وائس چانسلر کی جانب سے اٹھائے جانے والے اقدام کو صدر پی ایم اے پروفیسر ڈاکٹر مسعودالروف ہراج اور دیگر کابینہ ممبران نے سراہا اور حکومت پنجاب و سیکرٹری ہیلتھ سے مطالبہ کیا کہ شیڈول کے مطابق نمائندے نامزد کر کے انٹرویو کروا کر بھرتی کا عمل مکمل کروایا جائے تاکہ یونیورسٹی میں فیکلٹی کی کمی کا مسئلہ حل ہو سکے۔

بحران

مزید : ملتان صفحہ آخر